تجارت

ایڈوانٹیج ڈائیلاگ میں کوکوکولا کے وائس پریسڈینٹ اشتیاق امجد بولے، کمپنی ۰۰۱ کروڑ کورونا متاثرین پر خرچ کریگی .

Written by Taasir Newspaper

Taasir Urdu News Network | Patna | May 02, 2020

۰ حیدرآباد کی مادریٹر دیپیکا مہیہ دھارا سے بات چیت میں انہوں نے چھوٹے صنعتوں کو بچانے میں سرکاری تعاون کی وکالت کی
۰ کووڈ ۔ ۹۱ سے پیداشدہ مسائل پر مثبت سوچ کے ساتھ ہم ایک ہوکر قابو پا سکتے ہیں

پٹنہ : کوکوکولا کے وائس پریسڈینٹ اشتیاق امجدنے کہا کہ کووڈ ۔ ۹۱ سے پیداشدہ مسائل پر مثبت سوچ کے ساتھ ہم ایک ہوکر قابو پا سکتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ کووڈ ۔۹۱ کیلئے کوکوکولا ۰۰۱ کروڑ کورونا متاثرین پر خرچ کریگی ۔ ۰۵ ہزار لوگوں کا کھانا اور بارد مشروب دیکر بھی تعاون کررہے ہیں ۔ یہ وبا ہندوستان کو بھی متاثر کریگی لیکن مجھے پورا بھروسہ ہے کہ کچھ وقت کے بعد بھارت اس سے نکل پائیگا۔ انہوں نے کہا کہ صنعتی دنیا کو بڑا دھکا لگنے کی امید ہے ۔ چھوٹے صنعتوں کو بڑھانے کیلئے مدد کی ضرورت پڑیگی ۔ چھوٹے صنعتوں کو مدد کرنے میں حکومت کا کردار اہم ہوگا ۔

وہ آج ڈیجیٹل پلیٹ فارم زوم پر ایڈوانٹیج ڈائیلاگ کے پہلے سیشن میں بول رہے تھے ۔ انہوں نے کہا کہ کوکوکولا پینے کو لیکر لوگوں میں پیدا غلط فہمی پھر سے خارج کردیا ہے اور کہا کہ یہ کسی طرح سے انسان کیلئے نقصان دہ نہیں ہے ۔ کچھ ڈاکٹروں نے بھی اسکے پینے سے نقصان ہونے کی بات کو غلط بتایا ہے ۔ اور کہا کہ اسکے پینے سے کسی طرح کا نقصان نہیں ہوگا ۔ انہوں نے کہا کہ ہر انسان کو دو لیٹر پینے کی چیز پینا چاہیئے چاہے وہ ڈرنکس ہو یا پانی۔ انہوں نے کہا کہ چھوٹی چھوٹی خوشیاں اور چھوٹی چھوٹی امیدیں ہم سبھی کو کھڑا کریگی ۔ ہمیں اپنے دل میں احساس کی جگہ کو بڑھانا ہوگا ۔ انسانیت اور زندگی جینے کے تئیں سوچنا ہوگا۔ کووڈ ۔ ۹۱ میں پیدا شدہ پریشانیوں کی بحث پر انہوں نے کہا کہ ابھی کچھ وقت کیلئے یہ پروگرام ڈیجیٹل پلیٹ فارم پر ہونگے۔مواصلاتی نظام کے بارے میں انہوں نے کہا کہ ابھی بھی یہ کافی اہم ہے ۔ پی آر ایجنسی کو ڈیجیٹل مارکیٹنگ اسپیشلسٹ بننا پڑیگا ۔

انہوں نے کہا کہ وباءکے بعد ہمیں تین چیزوں پر دھیان دینا ہوگا۔ پہلا کہ حفاظت جس میں روزگار کی باتیں ہونگی ، دوسری کہ کمیونیٹی کو ہم کیسے مدد کرینگے اور تیسرا کہ اقتصادیات کو کیسے جلدی سے جلدی پٹری پر لائیں ۔ انہوں نے کہا کہ اس وباءکی وجہ سے ہماری معاشی ترقی کی شرح پر خاصا اثر پڑیگا۔ انہوں نے کہا کہ چین نے کووڈ ۔ ۹۱ پر قابو پاکر اپنی اقتصادیات ٹھیک کرنا شروع کردیا ہے ۔ اسی طرح ہم لوگوں کو بھی اس بیمار ی سے نمٹنے کے بعد اپنی اقتصادیات پر پوری توجہ دینا ہوگی ۔ حیدرآباد کی مادریٹر دیپیکا مہیہ دھارا سے بات چیت میں انہوں نے چھوٹے صنعتوں کو بچانے میں سرکاری تعاون کی وکالت کی۔

اس موقع پر ایڈوانٹیج گروپ کے بانی اور سی ای او خورشید احمد نے بتایا کہ گزشتہ ۵۲ اور ۶۲ اپریل کو پہلے ایپی سوڈ کے بعد سے ہی ایڈوانٹیج ڈائیلاگ کافی مشہور ہوگیا ہے ۔ اس کے بعد اگلے ایپی سوڈ میں بڑے بڑے دانشور اور نامور ہستیاں آئینگے ۔ کل پہلے سیشن میں گونج کے بانی انشو گپتا سے بات کرینگی این ڈی ٹی وی کی مشہور میڈیا اکسپرٹ نغمہ سحر ۔ ان کا موضوع ہے کووڈ ۔۹۱ میں سماجی ترقی سیکٹر کا رول۔ اس دن کے دوسرے سیشن میں ایل ایکس ایل آئیڈیا کمپنی کے ایم ڈی سید سلطان احمد سے بنگلورو سے ایما کی پریزینٹر سریتا رگھو ونشی بات کرینگی۔ ان کا موضوع ہے لگاتار تعلیم حاصل کرنا اور سیکھنا ۔ سید سلطان احمد کو بچوں پر فلم ( اسکول سنیما ) بنانے کیلئے چھ بار صدر سے انعام مل چکا ہے ۔

۔ ایڈوانٹیج گروپ کے بانی اور سی ای او خورشید احمد نے کہا کہ ڈائیلاگ کامیابی کے ساتھ چل رہا ہے ۔ اسے لوگ کافی پسند کر رہے ہیں ۔ ائندہ ۶۱ ایپیسوڈ کی تیاری ہوچکی ہے ۔ جس میں ایمس پٹنہ کے ڈائریکٹر ڈاکٹر پربھات کمار، امریکہ سے شاعر، تخلیقکار اور نغمہ نگار فرحت شہزاد ، ڈاکٹر رنجنا کماری جو خواتین کے مدعے پر اظہار خیال کرینگی، پی آر سی اے ائی کے نتن منتری آئینگے ۔ سبھی یوتھ سے اپیل ہے کہ اس سیشن میں فری رجسٹر کرکے اس سے فائدہ اٹھائیں۔ آپ اس ای میل info@advantagedialogue.com پر جاکر اپنا رجسٹریشن کرائیں او ر اس پروگرام کو فری دیکھیں کرینگی

About the author

Taasir Newspaper