مغربی بنگال

ممتا بنرجی نے سومن مترا کو خراج عقیدت پیش کیا

Taasir Newspaper
Written by Taasir Newspaper

تاثیر اردو نیوز نیٹ ورک،30؍جولائی2020

کلکتہ: وزیر اعلیٰ ممتا بنرجی نے بنگال کانگریس کے صدر سومن مترا کے انتقال پر افسوس کا اظہار کرتے ہوئے ان کے اہل خانہ اور حامیوں کے ساتھ اظہار تعزیت کیا ہے۔سینئر کانگریسی رہنما سومن مترا بنگال کی سیاست کے اہم ستون تھے اور سیاست سے اوپر اٹھ کر ان کے تعلقات تمام سیاسی جماعتوں سے تھا۔سیاست میں وہ ممتا بنرجی سے سینئر تھے اور ممتا بنرجی جب ریاستی کانگریس کی صدارت کی دوڑ میں سومن مترا سے ہارگئیں تو وہ ناراض ہوکر کانگریس چھوڑ کر ترنمول کانگریس کی تشکیل دی۔تاہم سومن مترا کا موقف تھا کہ ان کیلئے سیاست کبھی بھی اقتدار کے حصول کا ذریعہ نہیں رہا اور نہ ہی وہ اقتدار میں آنے کیلئے کچھ کیا۔2014میں کانگریس میں دوسری مرتبہ واپس آنے کے بعد سومن مترا نے کہا تھا کہ وہ اصولوں کی سیاست کرتے ہیں اور اگر اقتدار ہی ان کی سیاست کا ماحصل ہوتا تو وہ ترنمو ل کانگریس کوایسے وقت میں نہیں چھوڑتے جب ترنمو ل کانگریس عروج میں تھی۔سومن مترا نے کہا تھا کہ کبھی بھی وہ وزارت اعلیٰ کے دوڑ میں نہیں تھے۔وہ ممتا بنرجی کے پیچھے رہ کر بھی جدوجہد کیا ہے۔سومن مترا جب کانگریس چھوڑ کر 2008 میں اپنی پارٹی قائم کرلی تھی اس وقت انہوں نے کہاتھا کہ وہ چاہتے ہیں کہ ممتا بنرجی ریاست کی وزیرا علیٰ بنیں۔2009میں ترنمول کانگریس کے ٹکٹ پر ڈائمنڈ ہاربر لوک سبھا حلقے سے انتخاب جیتنے کے بعد 2014 جنوری میں وہ ترنمول کانگریس چھوڑ کر ایک بار پھر کانگریس میں شامل ہوگئے۔اس وقت لوگ کانگریس چھوڑ کر ترنمول کانگریس میں شامل ہورہے تھے مگر سومن مترا لوک سبھا کی رکنیت سے استعفیٰ دے کر کانگریس میں شامل ہوگئے۔

About the author

Taasir Newspaper

Taasir Newspaper