کھیل

ممبئی انڈینس کے لئے کمزور کڑی ثابت ہوسکتی ہے اسپن گیندبازی، اچھے اسپنروں کی کمی

Taasir Newspaper
Written by Taasir Newspaper

Taasir Urdu News Network | Mumbai  (Maharashtra)  on 15-September-2020

ممبئی: بڑے شاٹ لگانے والے بلے بازوںکی موجودگی دفاعی چمپئن ممبئی انڈینس کو ایک مضبوط ٹیم بناتی ہے لیکن تجربہ کار فاسٹ بولر لاسیت ملنگا اور اچھے اسپنر کی کمی سے ٹیم کوانڈین پریمیر لیگ (آئی پی ایل) کے خطاب کو بچانے میںکمزورکڑی ثابت ہو سکتی ہے۔ ٹیم اپنے بیشتر (آٹھ) میچ ابوظہبی کی سست رفتار پچ پر کھیلے گی اور کامیابی کے لئے ان حالات کو ایڈجسٹ کرنا ضروری ہوگا۔کپتان روہت شرما اور جنوبی افریقہ کے کوئٹن ڈی کوک کی ٹھوس افتتاحی جوڑی بیٹنگ میں ممبئی انڈینس کی مضبوطی فراہم کرے گی، اس کے علاوہ ضرورت پڑنے پر آسٹریلیائی کرس لین بھی بہتر انتخاب ہوںگے۔ ممبئی انڈینس ٹیم 19 ستمبر کو چنئی سپر کنگز کے خلاف ٹورنامنٹ کے پہلے میچ کے لئے میدان میں اترے گی۔سوریہ کمار یادو، کیرون پولارڈ، ہاردک پانڈیا اور کنال پانڈیا جیسے بیٹسمین انجری کے واپس آنے سے ٹیم کا مڈل آرڈر مضبوط ہوگا۔ان کا بنیادی مسئلہ بولنگ کا صحیح امتزاج بنانے میں ہوگا، خاص طور پر اسپن کے شعبے میں۔ تیز بولنگ کے بارے میں بات کریں تو ملنگا ذاتی وجوہات کا حوالہ دیتے ہوئے ٹورنامنٹ سے دستبردار ہوگئے ہیں۔ اس کی عدم موجودگی میں، جسپریٹ بمراہ پر دباؤ زیادہ ہوگا۔ گزشتہ سیزن میں ٹیم کے لئے سب سے زیادہ 19 وکٹیں لینے والے بمراہ انجری کے باعث طویل عرصے تک کرکٹ سے دور رہے ہیں۔غیر ملکی فاسٹ بولروںمیں مچل میک لینگھن اور ٹرینٹ بولٹ بائیں ہوںگے جبکہ نیتھن کولٹر آل راؤنڈر آل رائونڈ کا کردار ادا کریںگے۔ آسٹریلیا کے جیمس پیٹنسن بھی موجود ہیں ٹیم میں سلیکشن کے لئے ان سب کے مابین سخت مقابلہ ہوگا۔ خطاب کی مضبوط دعویداراس ٹیم کے لیے اچھے اسپنروں کی کمی محسوس ہوسکتی ہے۔اسپنروں میں ان کے پاس کنال اورراہل چاہر سے توقعات ہوں گی، جنہوں نے گزشتہ سیزن میں بہتر کارکردگی کا مظاہرہ کیا۔ آف اسپنر جینت یادو گھریلوسیزن اچھا نہیں رہا ہے، دیکھنا ہوگا کہ اس سیزن میں وہ کتنے میچ کھیلتے ہیں۔

About the author

Taasir Newspaper

Taasir Newspaper