دہلی

دہلی میں روزانہ 15 ہزار کروناکیس کا خدشہ ، تہواروں اور سردیوں میں رکھیں خصوصی تیاری

Taasir Newspaper
Written by Taasir Newspaper

Taasir  Urdu News Network | New Delhi  (India)  on 10-Oct-2020

نئی دہلی: سردیوں کے موسم اور تہواروں کے پیش نظر دہلی حکومت کو کرونا کی صورتحال سے نمٹنے کے لئے کئی مشورے دیئے گئے ہیں۔قومی سنٹر برائے امراض کنٹرول (این سی ڈی سی) نے کورونا بحران سے متعلق این آئی ٹی آئی آیوگ ممبر ڈاکٹر وی کے پال کی صدارت میں ماہرین کی جانب مرتب کردہ رہنما خطوط پر ایک رپورٹ تیار کی ہے۔ رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ دہلی میں روزانہ0 1500 معاملات کیسز ممکنہ طور پر رپورٹ کئے جاسکتے ہیں۔اس رپورٹ میں دہلی میں روزانہ آنے والے 15000 کیسز کے مطابق تیاری کرنے کو کہا گیا ہے۔ یہ رپورٹ دہلی حکومت کو پیش کی گئی ہے۔ پوری رپورٹ بنیادی طور پر 6 اہم نکات پر مرکوز ہے۔رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ سردیوں میں سانس لینے کی پریشانی زیادہ شدید ہوجاتی ہے۔ بڑی تعداد میں مریض دہلی کے باہر سے آسکتے ہیں۔ دور دراز سے آنے والے مریض زیادہ سنگین ہوسکتے ہیں۔ اس کے ساتھ ، تہوار کی وجہ سے کرونا کیسز اچانک بڑھ سکتے ہیں۔ لہذا یہ تجویز کی جاتی ہے کہ دہلی حکومت کو روزانہ 15 ہزار مثبت کیسز کے مطابق تیاری کرنی ہوگی ،اور 20فیصد یعنی 3000 بستروں کا انتظام اسپتال میں معتدل بیماری کے مریضوں کے علاج کے لئے کرنا چاہئے۔رپورٹ کے مطابق اس تناسب کے حساب سے اور اسی کے مطابق آئی سی یو ، نان آئی سی یو ، کووڈ کیئر ، آئی سو لیشن وغیرہ کا بھی انتظام کیا جانا چاہئے۔ اس رپورٹ میں یہ بھی کہا گیا ہے کہ زیادہ بھیڑ کی وجہ سے انفیکشن کا خطرہ زیادہ ہوتا ہے۔ اسے ہر قیمت پر روکنا ہوگا۔ چھٹھ پوجا ، دیوالی ، دسہرہ کرسمس ، عید ، نئے سال کے جشن میں زیادہ چیلنجز ہوں گے ۔

About the author

Taasir Newspaper

Taasir Newspaper