اتر پردیش

کانگریس کو مٹا نیکا نعرہ دینیوالے آج خدسرکار بچانیکوبیتاب: اسلم باشا

Taasir Newspaper
Written by Taasir Newspaper

Taasir  Urdu News Network | Saharanpur  (Uttar Pradesh)  on 15-Oct-2020

سہارنپور: جب تک کانگریس کارکنان نے اداکارہ خوشبو کو سر پر اٹھائے رکھا انکے ناز برداشت کئے اسکا سارا خرچ کارکنان کے سر تھا وہ ہمارے ساتھ کھڑی رہی مگر اسکے بعد بھی جب خوشبو نے پارٹی کے لئے کچھ بھی نہی کیا آج وہ کانگریس کو چھوڑ نیکا دعوہ کر رہی ہے سیاست کھیل رہی ہے سچ یہی ہے اسکو اداکاری بھی ٹھیک ڈھنگ سے نہی آتی ہے سیاست کا الف وہ کیاجانے یہ وہ لوگ ہیں کہ جو سادھو سنت بن کر کانگریس میں شامل ہوتے ہیں اور پھر دھیرے دھیرے پارٹی کو نقصان پہنچانہ شروع کردیتے ہیں یہی کام کانگریس میں آکر اداکارہ خشبو نے کیا ہے ہما رے با ضمیر کارکنان خد انسے بچنا چاہ ہتے تھے مگر وہ خد ہی نکل بھاگی کل تک چو لوگ کانگریس کو مٹانے کا دم بھرتے تھے آج وہ بہار اور مدھیہ پردیش میں اپنی سرکاریں بچانیکو تڑپ رہے ہیں دن رات سڑکونپر ہیں مگر فطرت سے مجبور ہیں آج بھی ہندو مسلم کا جملہ بھول نہی پائے یہی جملہ انکی ہار کا بڑا سبب بنیگا! کانگریس کے قومی لیڈر اسلم باشا نے کل دیر شام اخبارات سے گفتگو کرتے ہوئے یہ بھی کہاکہ ملک بھر میں آج کسانوں کے مسائل منھ پھیلائے کھڑے ہوئے ہیں انکی تنگی اور مشکلات پر سبھی چپ ہیں کسانوں کے ذریعہ خد کشی کی شرمناک وارداتوں کا ذکر کرتے ہوئے کانگریس کے قائد اسلم باشا نے کہا کہ پورے دیش کاکسان آج سخت الجھنوں پریشانیوں کا شکار بنا ہے خاص طور سے یوپی میں گنا کسانوں کو بقایا رقم نہ ملنے کی وجہ سے ہمارے کسان بھائیوں کو آج فاقہ کشی اور خد کشی جیسے شرمناک حالات سے دوچار ہونا پڑ رہاہے کسان بھائیوں کو اپنا پیسہ اور حق لینے کیلئے سرکار کیخلاف سڑکونپر اتر کر احتجاج کرنیکو مجبور ہونا پڑ رہا ہے لیکن حکومت کو اسکی کوئی فکر نہیں ہے چینی ملیں کسانوں کے گنے کی بقایا رقومات گزشتہ کتنے ہی سالوں سے ادا نہیں کی لگاتار مانگ کے بعد بھی میرٹھ کمشنری سہارنپور کمشنری ، بریلی زون ،مراد آباد زون اور لکھنئو کے ارد گرد کی سیکڑوں چینی مل کسی بھی طرح کسانوں کا بقیہ ادا نہی کر پا رہی ہیں چینی ملوں پر کسانوں کا اربوں روپیہ بقایا ہے آج ملک بھر میں مہنگائی اور بے روزگاری سے لوگ تنگ ہیں گھریلو گیس مہنگی ہوچکی ہے بیروزگاری اور مہنگائی کے سبب گھر گھر میں مسائل منھ کھولے کھڑے ہیں عام آدمی کا جینا دوبھر ہوتا جارہاہے سرکار اپنی کرسی بچانے میں مشغول ہے بہار کا چنائوں فتح کرنیکے لئے طرح طرح سے سیاسی ہتھ کنڈے استعمال کر رہی ہے عوام کے دکھ درد سے سرکار انجان بنی ہے پورے ملک کا عوام سخت حالات کا شکار بناہواہے!

کانگریس کے قومی رہبر اسلم باشا کا سیدھا کہناہیکہ آج حکومت صرف جملے بازی کرنے میں مصروف ہے ۷۲سالوں میں پہلی مرتبہ ملک بھر میں خاص طور سے اترپردیش کی بہو بیٹیوں پر ظلم وستم کی شرمناک حرکتیں دیکھنے کو مل رہی ہیں سرکار ان حرکات کو خاص طبقہ سے جوڑ کر اپنا دامن بچانہ چاہتی ہے ایسا لگنے لگاہیکہ شاید سرکار دلت اور مسلم کو انسان ہی نہی سمجھتی ہے اسی لئے اس طبقہ کیساتھ جانوروں جیسا سلوک عام ہوگیاہے مظلومین کو ہی ستایا جارہاہے ظالموں، شیطانوں، زانیوںاور قاتلوں کو بچایا جارہاہے سیاسی کھیل میں آجکل یہاں یونیورسٹیوں اور کالجوں میں پولیس کے مظالم دیکھنے کو مل رہے ہیں کالجوں کے طالب علموں پر ملک سے دشمنی کے مقدمات درج کئے جارہے ہیں اصل فسادیوں کی پشت تھپ تھپائی جارہی ہے اسلم باشا نے بیباک لہجہ میں کہاکہ ملک کے مقدس آئین کی حفاظت ہر ہندوستانی شہری کی ذمہ داری ہے اور جب ہمارے لوگ اور ہمارے طالب علم آئین کی حفاظت کیلئے آواز بلند کر رہے ہیں ایسے میں مودی سرکار کے اشارے پر بھاجپا کے غنڈے عام لوگوں پر اور اسکول کالجوں کے طالب علموں پر حملہ کر رہے ہیں اسلم باشا نے کہا کہ مودی سرکار کی پالیسیوں کی وجہ سے پورے ملک میں افراتفری کا ماحول ہے اور عالمی سطح پر ملک کی ساکھ گر رہی ہے ایسے میں ملک کے لوگوں کے سامنے آئین بچانے کیلئے پرامن مظاہرہ کرنے کے علاوہ کوئی راستہ نہیں ہے لیکن بھارتیہ جنتا پارٹی کے کارکنان آجکل ہر ایک آندولن میں گھس کر پلاننگ کے تحت ہر جگہ دنگا کرانے کی کوشش کر رہے ہیں پورا ملک ان کی حرکتوں کو دیکھ رہا ہے ملک میں بڑھ رہی مہنگائی، بے روزگاری اور اصل مسائل سے لوگوں کا دھیان ہٹانے کیلئے سرکار ہر روز نئے ایجنڈے پر کام کر رہی ہے انہوں نے صاف کیاکہ کانگریس پارٹی ہمیشہ فسادیوں کو جیل بھیج نے، زانیوں کو سخت سے سخت سزائیں دلانے اور دلت و مسلم فرقہ کو جانی مالی نقصان پہچانیوالے غیر سماجی عناصر کیخلاف سخت ایکشن لینے کی مانگ پر ڈٹی ہے اور ڈٹی رہیگی جب تک کہ سبھی ظالم جیل نہ چلے جائیں شہری ترمیم بل، این آر سی اور مردم شماری کے موجودہ طریقہ کے بھی ہم آج سخت خلاف ہے اور ملک کے مظلوم عوام کیساتھ ہر قدم پر انکے شانہ بشانہ کھڑے ہوئے ہیں ظالم قیادت کیخلاف ہم میدان سے بھاگنے والے نہی ہیں!

About the author

Taasir Newspaper

Taasir Newspaper