ریاست

نیتا جی کی جینتی پر آئسااور انوس نے منایا آزاد ہندیوم کسان

Taasir Newspaper
Written by Taasir Newspaper

Taasir Urdu News Network | Betiya (Bihar)  on  23-January-2021

بتیا: تحریک آزادی کے عظیم مجاہد نیتا جی سبھاش چندر بوس کی جینتی پر آئسا اور انوس نے دہلی میںہو رہی کسان تحریک کے ساتھ اتحاد کا مظاہرہ کر تے ہوئے تینوں زرعی قوانین کو رد کرو، ایم ایس پی پر فصل خرید قانون کی گارنٹی وغیرہ نعروں کے ساتھ ایم جے کے کالج سے ضلع کلکٹریٹ تک مارچ کیا۔ سب سے پہلے ایم جے کے کالج کیمپس میں آئسااور انوس کے لیڈران و کار کنان نے نیتا جی سبھا ش چندر بوس کی تصویر پر گل پو شی کی ۔ملک کو کار پوریٹ کے ہاتھوں میں سونپنا بند کر و، کسان مخالف زرعی قانون واپس لوکسانوں پر ظلم کر نا بند کروو غیرہ نعرے لگا تے ہوئے ضلع کلکٹریٹ گیٹ پر پہنچ کر اجلاس میں تبدیل ہو گیا۔ اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے انوس ضلع کنوینر فر حان رضا نے کہا کہ مر کز کی کار پوریٹ پرست سر کار پر تیکھا حملہ کرتے ہوئے کہا کہ اگر کسان ملک کی 135 کروڑ آبادی کو دانا مہیا کراسکتے ہیں تو وہ اس اناج پر ڈاکا ڈالنے والوں کا جینا محال بھی کر سکتے ہیں ۔ وہ سر کار کے ساتھ 11 دور کی بات چیت کے بعد بھی کسانوں کا اپنے مطالبات پر اڑے رہنا اس بات کو صاف کر تا ہےکہ اناج پر ڈاکہ ڈالنے والوں کی اب خیر نہیں ہے۔ چاہے وہ اڈانی امبانی جیسے سر مایہ دار ہوں یا انکی سر مایہ داری مودی سر کار ۔انہوں نے کہا کہ مر کز کے جملہ باز سر کار جہاں ایک ایک کر تمام جمہوری اداروں کو تباہ کر رہی ہے۔ وہیں ملک کے کسان تمام روکاوٹوں کے باوجود آزادی اور جمہوریت بنائے رکھنے کی لڑا ئی لڑ رہے ہیں ۔ہمیں اس لڑائی کو ایک ساتھ ملک کر جیتنا ہو گا۔

About the author

Taasir Newspaper

Taasir Newspaper