یوگی حکومت کے تانا شاہی رویے سے لوگوں میں شدید ناراضگی

Taasir  Urdu  News  Network  |  Deoband  (Uttar Pradesh)   on  17-February-2021

دیوبند: شہر کے محلہ گوجر واڑہ میں واقع چودھری اظہر کی رہائش گاہ پرسماجوادی پارٹی کی ایک میٹنگ کا انعقاد کیا گیا ،جس میں کیرانہ سیٹ سے ممبر اسمبلی ناہید حسن اور ان کی والدہ سابق ممبر پارلیمنٹ تبسم حسن سمیت 40افراد پر گینگسٹر ایکٹ کے تحت کارروائی کرنے پر شدید غم و غصہ کا اظہار کیا گیا ۔منعقدہ میٹنگ میں خطاب کرتے ہوئے سماجوادی پارٹی کے سابق ضلع سکیٹری سکندر گوڑ نے کہا کہ اس وقت ریاست میں غیر اعلانیہ امرجنسی نافذ ہے اور سیاسی حریفوں کے خلاف فرضی مقدمات قائم کرانا حکومت کا خاص شغل بن گیا ہے ،ممبر پارلیمنٹ محمد اعظم خان اور ناہید حسن اسکی زندہ مثال ہیں ،انہوں نے کہا کہ حکومت اس طرح کی کارروائی سے باز آئے بصورت دیگر سماجوادی پارٹی کارکنان تحریک چلانے کو مجبور ہونگے ۔چودھری اظہر اور حاجی شہزاد نے شاملی حکام کی کارروائی کی شدید مذمت کرتے ہوئے کہا کہ ممبر اسمبلی ناہید حسن اور ان کی والدہ سابق ممبر پارلیمنٹ تبسم حسن سمیت 40افراد پر گینگسٹر ایکٹ لگاناسراسر غلط ہے ،معاملہ کی سی بی آئی جانچ ہونی چاہئے ،انہوں نے کہا کہ اگر متاثرین کو انصاف نہیں ملا تو سماجوادی پارٹی کارکنان سڑکوں پر اترنے کو مجبور ہونگے ۔میٹنگ میں حاجی زندہ حسن ،سلمان قریشی ،فاروق علی ،اسعد انصاری ،ببلو ،اقبال ،محمد بھورا ،محمد جاوید ،چودھری اطہر حسن ،محمد ندیم ،افضال اور محمد عمران وغیرہ موجود تھے ۔