ملک بھر سے

عائشہ خودکشی معاملہ میں شوہرکوپولیس نے کیاگرفتار

Taasir Newspaper
Written by Taasir Newspaper

Taasir  Urdu  News  Network  |  Ahamdabad  (Gujrat)   on  02-March-2021

احمد آباد: کو سابرمتی ندی میں کودنے والی 23 سالہ عائشہ بانو مکرانی کی خودکشی معاملے میں پولیس کو ایک بڑی کامیابی ملی ہے۔ گجرات پولیس نے پیر کی رات عائشہ کے مفرور شوہر عارف خان کو راجستھان کے پالی سے گرفتار کیاگیاہے۔ عائشہ نے خودکشی سے پہلے ایک ویڈیو پیغام ریکارڈ کیا تھا۔ اس میں اس نے اپنے شوہر پر اس کا استحصال کرنے کا الزام عائد کیاتھا۔ عائشہ کی شادی 2018 میں ہوئی تھی۔ اس کے بعد پولیس نے خود کشی کو اکسانے کا مقدمہ درج کرلیا گیا تھا۔میڈیا رپورٹس کے مطابق سابرمتی ریور فرنٹ ویسٹ پولیس کے انسپکٹر وی ایم دیسائی نے اطلاع دی ہے کہ عارف خان کو پالی سے گرفتار کیا گیا ہے۔ اس سے قبل پولیس کی ایک ٹیم بھی جالور میں واقع اس کے گھر گئی تھی ، لیکن وہ وہاں نہیں ملا۔ اس کے بعد ٹکنالوجی کی مدد سے ملزم کو پالی سے گرفتار کیاگیاہے۔ اب اسے منگل کو ٹرانزٹ ریمانڈ کے ذریعہ احمد آباد لایا جائے گا۔ پولیس سپرنٹنڈنٹ شیام سنگھ کا کہنا ہے کہ یہ پورا آپریشن گجرات پولیس نے انجام دیاہے۔ جالور پولیس نے اس میں مکمل مدد فراہم کی ہے۔ عائشہ احمد آباد کے ریلیف روڈ پر واقع ایس وی کامرس کالج میں معاشیات سے ایم اے کی تعلیم حاصل کررہی تھیں۔ نجی کمپنی میں ملازمت بھی کرتی تھی۔ اس کی عارف سے 6 جولائی 2018 کو شادی ہوئی تھی۔ اس کے بعد 10 مارچ 2020 سے عارف کی جانب سے جسمانی اور ذہنی اذیت دینے کے بعد عائشہ اپنے سسرال سے علیحدہ ہوگئی تھی۔25 فروری کو خودکشی سے پہلے عائشہ نے دو منٹ کا ویڈیو پیغام ریکارڈ کیا۔ اس میں انہوں نے اپنے والد لیاقت علی مکرانی سے اپیل کی تھی کہ وہ انکے شوہر کے خلاف گھریلو تشدد کی رپورٹ درج نہ کریں۔

About the author

Taasir Newspaper

Taasir Newspaper