ریاست

حکومت تیسری لہر سے نمٹنے کیلئے تیار، بچوں کے بیڈس میں اضافہ، ڈائرکٹر پبلک ہیلتھ سرینواس راؤکابیان

Taasir Newspaper
Written by Taasir Newspaper

حیدرآباد۔25۔نومبر- تلنگانہ حکومت نے دعویٰ کیاہیکہ ریاست میں کوروناکی صورتحال پوری طرح قابو میں ہے اورپازیٹیو کیسس کی شرح گھٹ کر0.4 فیصدہوچکی ہے۔حکومت نے ٹیکہ کاری مہم میں شدت پیدا کرتے ہوئے ہر شخص کو ویکسین کی فراہمی یقینی بنانے سے متعلق اقدامات کی تفصیلات تلنگانہ ہائیکورٹ میں پیش کی ہے۔ڈائرکٹرپبلک ہیلتھ سرینواس راؤکی جانب سے پیش کردہ رپورٹ میں بتایاگیاہیکہ ریاست میں اقامتی اسکولوں اورہاسٹلس کے طلبہ میں کورونا ٹسٹ میں تیزی پیدا کی گئی ہے۔3ہزار سے زائد اقامتی اسکولوں میں کئے گئے کورونا ٹسٹ میں 195طلبہ پازیٹیو پائے گئے۔ عدالت کو بتایا گیاکہ 42 لاکھ افراد ایسے ہیں جنہوں نے ابھی تک ویکسین کی ایک بھی خوراک حاصل نہیں کی ہے۔ریاست میں ایک کروڑ8لاکھ افراد نے کوروناویکسین کی دونوں خوراک حاصل کرلی ہے۔ڈائرکٹر پبلک ہیلت کے مطابق ریاست میں 60 لاکھ ویکسین کی خوراک دستیاب ہے۔ کورونا کیسس اور پازیٹیو شرح میں بڑی حد تک کمی واقع ہوئی ہے۔ انہوں نے کہا کہ حکومت کورونا کی امکانی تیسری لہر سے نمٹنے کیلئے پوری طرح تیار ہے۔ سرینواس راؤ کے مطابق تیسری لہر میں بچوں کے متاثر ہونے کی اطلاعات کے پیش نظر حکومت نے دواخانوں میں بچوں کے آکسیجن سے مربوط بیڈس کی تعداد میں اضافہ کے علاوہ انفرااسٹرکچر سہولتوں کو بہتر بنانے خصوصی بجٹ جاری کیا ہے۔ ریاست بھر میں 30 سرکاری اور 76 خانگی مراکز میں آر ٹی پی سی آر ٹسٹ کی سہولت حاصل ہے جبکہ 1231 مراکز میں ریاپڈ انٹیجن ٹسٹ کیا جارہا ہے۔ عدالت کو بتایا گیا کہ ریاست بھر میں کوویڈ کے علاج کیلئے 1327 سرکاری اور خانگی دواخانوں میں 55442 بستروں کا انتظام کیا گیا ہے۔ دواخانوں میں آئی سی یو اور آکسیجن سے مربوط بستروں کے بشمول صرف 2.6 فیصد یعنی 1527 بستروں پر کورونا کے مریض ہیں۔ ڈاکٹرس اور پیرامیڈیکل اسٹاف کو خصوصی ٹریننگ دی جارہی ہے تاکہ تیسری لہر کی صورت میں متاثرہ بچوں سے نمٹا جاسکے۔ ریاست میں 82 آکسیجن تیاری پلانٹس قائم کئے گئے ہیں جن میں سے 75 کارکرد ہیں جبکہ مزید7جاریہ ماہ کے ختم تک کارکرد ہوجائیں گے۔کووڈ سے مرنے والے افراد کے خاندانوں کومرکزی حکومت کی جانب سے 50 ہزار روپئے کی امداد کی اسکیم پر تلنگانہ میں موثر عمل آوری کے اقدامات کئے گئے۔ ہائی کورٹ نے ڈائرکٹر پبلک ہیلت کی جانب سے پیش کردہ رپورٹ پر اطمینان کا اظہار کیا۔ چیف جسٹس کی زیر قیادت ڈیویڑن بنچ نے کہاکہ کورونا سے نمٹنے کیلئے صرف حکومت پر انحصار کرنے کے بجائے عوام کو چوکس رہتے ہوئے احتیاطی تدابیر اختیار کرنی چاہیئے۔

About the author

Taasir Newspaper

Taasir Newspaper