فن فنکار

سائنا نہوال اور پرنئے دوسرے راؤنڈ میں

Taasir Newspaper
Written by Taasir Newspaper

نئی دہلی، 12 جنوری- چوتھی سیڈ ہندوستان کی سائنا نہوال اور آٹھویں سیڈ ایچ ایس پرنائے انڈیا اوپن بیڈمنٹن ٹورنامنٹ کے دوسرے راؤنڈ میں پہنچ گئیں۔سائنا بدھ کو یہاں اندرا گاندھی اسپورٹس کمپلیکس کے کے ڈی جادھو ہال میں منعقد ہو رہے ٹورنامنٹ کے دوسرے راؤنڈ میں پہنچ گئیں جب ان کی حریف جمہوریہ چیک کی ٹریزا سوابیکووا دوسرے گیم میں ریٹائر ہو گئیں۔ جب سوابیکووا نے میچ چھوڑا تو سائنا 18 منٹ تک جاری رہنے والے میچ میں 22-20، 1-0 سے آگے تھیں۔ سائنا کا مقابلہ دوسرے راؤنڈ میں ہم وطن مالویکا بنسود سے ہوگا۔ مالویکا نے ہم وطن سامعہ عماد فاروقی کو پہلے راؤنڈ میں 34 منٹ میں 18-21 ,9-21 سے شکست دی۔مردوں کے زمرنے میں پرنئے نے اسپین کے پابلو ابیان کو 33 منٹ میں 14-21، 7-21 سے شکست دی۔ پرنئے کا اگلا مقابلہ ہم وطن متھن منجوناتھ سے ہوگا جنہوں نے فرانس کے آرناؤڈ مرکل کو ایک گھنٹہ پانچ منٹ تک جاری رہنے والے میچ میں 10-21, 21-15 ,16-21 سے شکست دی۔ دریںاثنا انجری سے لڑنے والی سائنا نہوال نے بدھ کو اپنے فٹنس مسائل کے بارے میں بات کرتے ہوئے کہا کہ اس کھیل کو چھوڑنے کا خیال ان کے ذہن میں بھی آیا تھا لیکن انہوں نے اسے ایک چیلنج کے طور پر لیاہے کہ کس طرح ان کا جسم زیادہ زخموں کو برداشت کر سکتا ہے۔سابق عالمی نمبر ایک سائنا کو زخمی ہونے کی وجہ سے 2021 کی عالمی چمپئن شپ سمیت کئی ٹورنامنٹس سے دستبردار ہونا پڑا۔ابھی بھی پوری طرح فٹ نہیں ہیں، سائنا سے انڈیا اوپن میں کھیلنے کی امید نہیں تھی لیکن وہ دوسرے راؤنڈ تک پہنچنے میں کامیاب ہو گئیں۔ان کی حریف جمہوریہ چیک کی تیریجا سوابیکووا نے کمر میں درد کی وجہ سے بدھ کو میچ چھوڑ دیا۔
اس وقت سائنا 22-20,1-0 سے آگے تھی۔سائنا نے میچ کے بعد آن لائن پریس کانفرنس میں کہاکہ میں سخت پریکٹس کرنے میں کامیاب رہی لیکن گرنے کی وجہ سے مجھے کمر کی بہت سی پریشانیاں ہو گئیں۔‘مجھے (تھامس اور اوبر کپ فائنل کے دوران) کے دوران بھی چوٹ لگی تھی لیکن مجھے نہیں معلوم تھا کہ گھٹنے میں کچھ مسئلہ تھا، جو فرنچ اوپن کے دوران مزید بڑھ گیا۔ سائنا نے کہاکہ اس میچ تک مجھے نہیں معلوم تھا کہ چوٹ کتنی سنگین ہے۔ اس کے بعد میں لنگڑا رہی تھی ۔ یہ ایک چیلنج ہے اور میں اسے قبول کرنا چاہتی ہوں۔ سائنا نے کہا کہ کورٹ (اسٹیڈیم) کے باہر بیٹھ کر اپنی چوٹوں کے ٹھیک ہونے کا انتظار کرنا واقعی انہیں پریشان کرتا ہے۔سائنا کو تھامس اور اوبر کپ فائنل (ڈنمارک) اور پھر فرنچ اوپن درمیان ہی میںچھوڑنا پڑا۔

About the author

Taasir Newspaper

Taasir Newspaper