دنیا بھر سے

روسی فوجی یوکرین کی دہلیز پر، فائرنگ کا سلسلہ دوسرے روز بھی جاری

Written by Taasir Newspaper

کیف، 25 فروری ۔ یوکرین پر روس کے حملے کے دوسرے روز بھی روسی فوج کی فائرنگ کا سلسلہ جاری ہے۔ روسی افواج یوکرین کے دارالحکومت کیف سے صرف 30 کلومیٹر کے فاصلے پر موجود ہیں اور دارالحکومت پر مسلسل میزائلوں کی بارش کر رہی ہیں۔
روس اور یوکرین کے درمیان جنگ انتہائی سنگین مرحلے پر پہنچ چکی ہے۔ یوکرین کے صدر کا کہنا ہے کہ روس کے حملوں میں اب تک 137 افراد ہلاک ہو چکے ہیں۔ ان میں 10 فوجی افسران بھی شامل ہیں۔ اس کے ساتھ ہی اس حملے میں اب تک 316 افراد زخمی ہو چکے ہیں۔ اس کے ساتھ ساتھ روسی فوجی مسلسل پیش قدمی کر رہے ہیں۔ وہ یوکرین کے دارالحکومت کیف پر قبضہ کرنے کی کوشش کر رہے ہیں۔
جنگ کے دوسرے روز جمعہ کو روسی فوج نے صبح چار بجے سے کیف پر میزائل حملے شروع کر دیے۔ روس کے کروز میزائل نے دارالحکومت کیف میں یوکرین کے لڑاکا طیارے کو مار گرایا۔ عینی شاہدین کے حوالے سے مختلف ذرائع سے موصول ہونے والی خبروں کے مطابق کیف میں آسمان سے آگ کی بارش ہوتی دکھائی دے رہی ہے۔ روسی فوج مسلسل کیف کے قریب پہنچ رہی ہے اور وہ دارالحکومت کیف سے صرف 30 کلومیٹر کے فاصلے پر ہے۔
اس کے علاوہ روسی فوج نے یوکرین کے کونوٹوپ کو چاروں اطراف سے گھیر لیا ہے۔ حملہ اتنا تیز تھا کہ صرف چالیس منٹ کے اندر کیف پر تین درجن میزائل داغے گئے۔ اس سے کیف میں خوف و ہراس کا ماحول پیدا ہو گیا ہے۔ امدادی کارروائیوں میں بھی مشکلات کا سامنا ہے۔

About the author

Taasir Newspaper