بہار

مدرسہ احمدیہ کریمیہ مصراولیا مظفرپور میں نئے تعلیمی سال کا آغاز

Written by Taasir Newspaper

Taasir Urdu News Network / M.Hassan

مظفرپور:23/مئی( اسلم رحمانی )شمالی بہار کی معروف تعلیم گاہ مدرسہ احمدیہ کریمیہ  مصراولیا اورائی مظفرپور میں نئے تعلیمی سال کا آ غا ز ہوگیا، اور باضابطہ تعلیم شروع ہوگئی- اس موقع پر مدرسہ میں  افتتاحی تقریب کا انعقاد کیا گیا- طلبہ سے خطاب کرتے ہوئے مدرسہ احمدیہ کریمیہ کے ناظم جناب الحاج حافظ نسیم احمد صاحب مدظلہ نے کہا کہ آ پ تمام طلبہ خوش قسمت ہیں کہ آ پ نے حصول علم کے لیے مدرسہ احمدیہ کریمیہ جیسی بافیض درسگاہ کا انتخاب کیا ہے ، اب آ پ تمام غیر تعلیمی چیزوں سے الگ ہوکر نیت کی درستگی کے ساتھ خوب محنت سے پڑھیے، آ ج آ پ کی محنت مستقبل میں آ پ کی بلندی کا ذریعہ ہے-  جناب مولانا طفیل اختر قاسمی نے کہا کہ علم وعمل کے ماحول میں رہکر آ پ کو فائدہ اٹھانے کا موقع ملا ہے، آ پ یہاں کے ایک ایک لمحے کو قیمتی سمجھکر کام میں لائیے- ناظم تعلیمات جناب قاری محمد زید صاحب نے طلبہ کو تعلمی سرگرمیوں سے واقف کراتے ہوئے کہا کہ یہاں تعلیم و تربیت کا نظام مختلف ہے، تمام نظام کی پابندی اور تعلیمی و تربیتی سرگرمیوں میں آپ کی حصہ داری آ پ کی ترقی کا ذریعہ ہے- جناب مولانا محمد امتیاز ثاقبی صاحب نے کہا کہ علم حاصل کرنے والوں کے لیے ضروری ہے کہ نیت کو درست کرکے مقصد کاتعین کرے، اساتذہ، درسگاہ اور کتابوں کا احترام کرے، اور ہر طرح کی دشواریوں کو برداشت کرکے مقصد کے حصول کی جدو جہد میں لگارہے-مولانابلال احمد رحمانی نے دینی تعلیم کی اہمیت پر روشنی ڈالتے ہوئے کہا کہ آپ طالبانِ علوم نبویہ ہیں، آپ کا اللہ کے نزدیک الگ مقام ہے، ضروری ہے کہ آپ کتابوں کے پڑھنے کے ساتھ ساتھ اپنی شخصیت کو اتباع رسول کے پیکر میں اس طرح ڈھالیں کہ نشست و برخاست، خورد و نوش، رہن سہن، تمام حرکات و سکنات اور اپنے ہر عمل سے سنت نبوی پر عمل پیرا نظر آئیں۔ تقریب کا اختتام مولانا محمد امتیاز ثاقبی کی رقت آمیز دعا پر ہوا- واضح رہے کہ مدرسہ احمدیہ کریمیہ مصراولیا اورائی مظفرپور، شمالی بہار کا قدیم دینی تعلیمی و تربیتی ادارہ ہے جسے  سلسلہ عالیہ نقشبندیہ مجددیہ کے عظیم بزرگ قطب زماں حضرت الحاج الشیخ منظور احمد نقشبندی مجددی قدس سرہ  نے خانقاہ نقشبندیہ کے زیرِ سایہ 1976 میں قائم فرمایا، الحمدللہ اس ادارہ نے روزاول سے دینی تعلیم کی اشاعت اور جہالت کے خاتمے میں اہم کردار ادا کیا ہے، الحمدللہ یہ کارگذار  ادارہ اس وقت بھی شیخ طریقت حضرت مولانا شمس الہدیٰ صاحب نقشبندی دامت برکاتہم اور حضرت مولانا مظفر عالم صاحب نقشبندی مدظلہ کی سرپرستی میں گراں قدر دینی، تبلیغی اور تعلیمی خدمات انجام دے رہا ہے- بفضلہ تعالیٰ امسال مقامی وبیرونی تین سو سے زائدطلبہ کا داخلہ ہوا ، جسمیں سے تقریباً سوطلبہ کے طعام و قیام کا انتظام منجانب ادارہ کیا جارہا ہے- اللّٰہ تعالیٰ اس ادراہ کو مزید ترقیات سے نوازے-

About the author

Taasir Newspaper