دنیا بھر سے

چین میں کورونا انفیکشن کے کیسز میں اضافے کے باعث بیجنگ کے کئی حصوں میں لاک ڈاؤن نافذ

Written by Taasir Newspaper

Taasir Urdu News Network / Mosherraf

بیجنگ، 22 مئی (ہ س)۔ چین میں کورونا انفیکشن کے کیسز میں اضافے کی وجہ سے بیجنگ کے کچھ حصے اتوار کو دوبارہ لاک ڈاؤن کی زد میں آ گئے۔ اس وقت چین کے کئی شہروں میں اس وبا کا پھیلاؤ جاری ہے۔
چین کے ہیجیان میں ایک حکومتی ترجمان نے کہا کہ حکام نے چاؤیانگ، فینگٹائی، شونی اور فانگشن اضلاع کے ساتھ ساتھ ہیدیان ضلع میں بھی لاک ڈاؤن نافذ کر دیا ہے۔ تمام انڈور تفریحی مقامات، جم، تربیتی ادارے اور شاپنگ مالز آج سے بند کر دیے گئے ہیں سوائے ڈیلیوری سروسز، فارمیسیوں اور ریستورانوں کے۔ دارالحکومت میں تمام سیاحتی مقامات بند رہیں گے اور تمام پارکس 30 فیصد گنجائش تک کھولے جائیں گے۔ اس کے علاوہ بیجنگ کے پانچ اضلاع کے رہائشیوں کو 28 مئی تک گھر سے کام کرنے کی ہدایت کی گئی ہے۔تاہم، چھٹپٹ کیسز میں اضافے کی وجوہات بتاتے ہوئے، ترجمان نے کہا کہ کورونا وائرس کی صورتحال انتہائی متعدی Omicron وائرس کی وجہ سے پیچیدہ ہوئی ہے، زیادہ تر مریضوں میں صرف ہلکی علامات ظاہر ہوتی ہیں۔ انہوں نے یہ بھی کہا کہ احتیاطی اصولوں کے بارے میں لوگوں کی لاپرواہی نے بھی اس وبا کو پھیلانے میں اہم کردار ادا کیا ہے۔نیشنل ہیلتھ کمیشن کی رپورٹ کے مطابق چین کی بہت زیادہ مشہور ‘زیرو کوویڈ’ حکمت عملی ٹوٹ رہی ہے۔ گزشتہ چند دنوں میں کورونا کے تیزی سے بڑھتے کیسز نے چین کو لاک ڈاؤن نافذ کرنے پر مجبور کردیا ہے، جیسا کہ 2020 میں نافذ کیا گیا تھا۔

About the author

Taasir Newspaper