کھیل

انگلینڈ میں روہت کابلاچلا تو انگریزوں کو شکست یقینی

Written by Taasir Newspaper

Taasir Urdu News Network – Mosherraf-21 June

نئی دہلی ، 21 جون :ہندوستانی ٹیسٹ ٹیم اس وقت انگلینڈ کے دورے پر ہے۔ ٹیم انڈیا کو انگلینڈ کے خلاف برمنگھم میں واحد ٹیسٹ کھیلنا ہے۔ یہ ٹیسٹ یکم جولائی سے شروع ہوگا۔ یہ میچ گزشتہ سال منعقدہ پانچ میچوں کی ٹیسٹ سیریز کا حصہ ہے۔ پھر ایک میچ کرونا کی وجہ سے منسوخ کر کے بعد میں کرانے کا فیصلہ کیا گیا۔ اب اسی میچ کے انعقاد کا فیصلہ کیا گیا ہے۔ ٹیم انڈیا اس وقت پانچ ٹیسٹ میچوں کی سیریز میں 2-1 سے آگے ہے اور وہ اس میچ کو جیت کر ورلڈ ٹیسٹ چمپئن شپ کے لیے اپنا دعویٰ مضبوط کرنا چاہے گی۔اس ٹیسٹ میں ٹیم انڈیا کو جیت دلانے کی ذمہ داری کپتان روہت شرما پر ہوگی۔ گزشتہ سال اگست میں جب یہ ٹیسٹ سیریز شروع ہوئی تھی ،تو کپتان روہت نہیں بلکہ ویراٹ کوہلی تھے، لیکن گزشتہ ایک سال میں ٹیم انڈیا میں کافی تبدیلیاں آئی ہیں اور اب کپتان روہت ہیں۔ ایسے میں روہت پر ٹیم انڈیا کو کامیاب بنانے کا دباؤ رہے گا۔ تاہم روہت کو بڑے میچ کا کھلاڑی مانا جاتا ہے اور وہ اہم میچوں میں بڑی اننگز کھیلنے کے لیے جانے جاتے ہیں۔یہی نہیں روہت کا انگلینڈ کے خلاف ریکارڈ بھی شاندار رہا ہے۔ پچھلے سال ہی انہوں نے اوول ٹیسٹ (چوتھا ٹیسٹ) میں جیمز اینڈرسن، اولی رابن سن، کرس ووکس، کریگ اوورٹن جیسے گیند بازوں کو جم کر پٹائی کرکے شاندار سنچری بنائی۔انگلینڈ کے گیند باز اس اننگز کو نہیں بھولے ہوں گے۔ تاہم، سٹوکس اس سیریز میں نہیں کھیل رہے تھے کیونکہ انہوں نے اس وقت غیر معینہ وقفہ لیا تھا۔ اس وقت جو روٹ ٹیم کے کپتان تھے لیکن اب اسٹوکس یہ ذمہ داری نبھا رہے ہیں اور ان پر روہت کے بلے کو روکنا مشکل ہوگا۔روہت نے اپنا پہلا ٹیسٹ میچ 2014 میں انگلینڈ کے خلاف کھیلا تھا۔ یہ میچ ساؤتھمپٹن کے گراؤنڈ پر کھیلا گیا۔ تاہم پھر وہ زیادہ رنز نہ بنا سکے اور دونوں اننگز میں 28 رنز ہی بنا سکے۔ تاہم اس کے بعد انہوں نے اس ٹیم کے خلاف ریکارڈ کو بہتر کرنا شروع کر دیا۔ روہت کی پہلی سنچری انگلینڈ کے خلاف فروری 2021 میں آئی تھی۔ پھر چنئی ٹیسٹ کی پہلی اننگز میں روہت نے اوپننگ کرتے ہوئے 161 رنز کی اننگز کھیلی۔ 231 گیندوں کی اپنی اننگز میں روہت نے 18 چوکے اور دو چھکے لگائے۔ اس میچ میں ٹیم انڈیا نے انگلینڈ کو 317 رنز سے شکست دی تھی۔

About the author

Taasir Newspaper