گائنوکولوجسٹ ڈاکٹرناہید فاطمہ حج بیت اللہ کے لیے عازم سفر

Taasir Urdu News Network – Mosherraf-15 June

امارت انسٹی ٹیوٹ آف کمپیوٹر اینڈ الیکٹرونکس امارت شرعیہ میں الوداعی تقریب کا انعقاد، نائب امیر شریعت کی دعا

اللہ کے فضل و کرم سے کئی برسوں سے لگاتار امارت شرعیہ کے، ذمہ داران، خدام اور ملازمین میں سے کوئی نہ کوئی ہر سال حج و زیارت بیت اللہ کی سعادت حاصل کرتا ہے، اس سال بھی مشہور مولانا سجاد میموریل اسپتال امارت شرعیہ کی گائنوکولوجسٹ محترمہ ڈاکٹرناہید فاطمہ کا مبارک سفر حج ہو رہا ہے، ان کی روانگی سے قبل آج مورخہ15/ جون2022  کونائب امیر شریعت بہار اڈیشہ وجھارکھنڈ حضرت مولانا محمد شمشاد رحمانی قاسمی صاحب کی صدارت میں امارت انسٹی ٹیوٹ آف کمپیوٹر اینڈ الیکٹرونکس امارت شرعیہ میں الوداعیہ اور دعائیہ نشست ہوئی۔ جس میں حضرت نائب امیر شریعت مد ظلہ نے حج کا سفر ارادے اور اللہ کی توفیق سے ہوتا ہے، اگر انسان عزم مصمم کر لیتا ہے تو اللہ کی طرف سے غیبی طور پر نصرت و مدد ملتی ہے۔ حج ایک عشقیہ عبادت ہے، اور دیدار الٰہی کا قرب جبین نیاز رکھنے کے بعد ہی حاصل ہو تا ہے، اگر انسان دل کے اندر پختہ ارادہ کر لے اور اللہ سے اس کے لیے توفیق و عنایت کی دعا کرتا رہے تو اللہ تعالیٰ اس کے لیے اسباب پید افرما دیتے ہیں۔ اس لیے یہاں جتنے لوگ ہیں سب لوگ سفر حج کا ارادہ کریں اور اللہ تعالیٰ سے توفیق اور وسائل کی دعا کریں۔اسپتال کے سکریٹری مولانا سہیل احمد ندوی صاحب نے ڈاکٹر صاحبہ کو مبارک باد دیتے ہوئے کہا کہ ڈاکٹر صاحبہ کو اللہ نے سفر حج کی سعادت نصیب فرمائی ہے، یہ ان کے ساتھ ساتھ اسپتال کے ہم سبھی خدام کے لیے نیک بختی کی بات ہے۔ ہم سب دعا کرتے ہیں کہ اللہ تعالیٰ مشکلات راہ کو آسان فرمائے اور حج مقبول عطا کرے۔ اور ڈاکٹر صاحبہ سے گزارش کرتے ہیں کہ مقامات مقدسہ میں ادارے کی ترقی و استحکام کے لیے اور ہم سب کے لیے خصوصی دعا کریں۔میڈیکل سپرنٹنڈنٹ جناب ڈاکٹر سید نثار احمد صاحب نے بھی ڈاکٹر صاحبہ کے لیے نیک خواہشات کا اظہار کیا اور دعا کی گزارش کی۔آخر میں حضرت نائب امیر شریعت مد ظلہ کی رقت آمیز دعا پر دعائیہ و الوداعیہ تقریب کا اختتام ہوا، سبھی لوگوں نے نم آنکھوں کے ساتھ ڈاکٹر صاحبہ کو اس مبارک سفر کے لیے رخصت کیا۔ اسپتال کی خواتین ڈاکٹرس اور اسٹاف نے ڈاکٹر ناہید فاطمہ کو گلدستہ پیش کر کے ان کے تئیں اپنے نیک جذبات کا اظہار کیا۔اس نشست میں ان حضرات کے علاوہ ڈاکٹر غلام محی الدین اشرفی، ڈاکٹر نظیراحمد خان، ڈاکٹر سید یاسر حبیب، ڈاکٹر تقی امام، ڈاکٹر رضیہ شاہین، ڈاکٹر نصرت یاسمین،ڈاکٹر فہد نسیم، ڈاکٹر ثانیہ خورشید، ڈاکٹر ایس اے اے نوشاد، ڈاکٹر مناظر حسنین، جناب اعجاز صاحب، اصغر علی صاحب، جناب شمیم صاحب، ہمایوں اشرف صاحب، جناب مولانا منہاج عالم ندوی صاحب،جناب انتخاب عالم صاحب،، ظفر صاحب کے علاوہ اسپتال کے تمام ڈاکٹرس اور کارکنان شریک تھے۔