بہار

بہار : ندیوں کی طغیانی سے سیلاب کی صورتحال قائم، احتیاطی ہدایات جاری

Written by Taasir Newspaper

Taasir Urdu News Network – Mosherraf- 1st July

پٹنہ ، یکم جولائی:بہار میں مانسون کی بارش کے درمیان جہاں کئی علاقوں میں سیلاب کی حالت پیدا ہو گئی ہے، وہیں حکومت پشتوں کی نگرانی کے لیے ڈرون کی مدد لینے کی بات کہہ رہی ہے۔ اِدھر اہم ندیوں کے آبی سطح میں اضافہ کے بعد کئی پشتوں پر دباؤ بنا ہوا ہے۔ آبی وسائل محکمہ کے ایک افسر نے بتایا کہ اس سال سیلاب کو لے کر محکمہ تکنیک کا استعمال کر رہی ہے۔ سیلاب پر حفاظتی سرگرمیاں، نئی تکنیک، سیلاب مینجمنٹ اصلاح مرکز کے تفصیلی ڈاٹا کے استعمال، قبل از وقت تنبیہ نظام کو مزید مضبوط بنانے اور پشتوں و ندیوں کی نگرانی میں ڈرون کا استعمال کرنے کی تیاری میں ہے۔اِدھر ریاست کے کئی حصوں میں ہو رہی بارش کے سبب ندیوں کی آبی سطح میں اضافہ ہوا ہے۔ آبی وسائل کے وزیر سنجے کمار جھا نے بھی گزشتہ دنوں افسران کے ساتھ ہوئی میٹنگ میں ان باتوں کو لے کر افسران کی توجہ مبذول کرائی تھی۔ سنجے کمار جھا کہتے ہیں کہ بارش اور نیپال سے آ رہی ندیوں کے پانی کو تو روکا نہیں جا سکتا، لیکن دستیاب ترکیبوں سے سیلاب سے بچاؤاور اس سے کم نقصان ہو، اُسے لے کر تکنیک کا استعمال کیا جا رہا ہے۔سیلاب والے علاقے سے جڑے افسران کو سیلاب مینجمنٹ اصلاح معاون مرکز سے حاصل اعداد و شمار کو پوری طرح استعمال کر حفاظتی کاموں کے معیار کو یقینی کرنے کی ہدایت دی گئی ہے۔ سیلاب راحت کیمپ کو لے کر بھی متعلقہ علاقوں کو ہدایت دی گئی ہے۔ دوسری طرف ندیوں کی آبی سطح میں اضافہ کے بعد کئی علاقوں میں سیلاب کی حالت بنی ہوئی ہے۔ آبی وسائل محکمہ کے ذریعہ جاری سیلاب بلیٹن کے مطابق گنڈک جہاں ڈمریا گھاٹ میں خطرے کے نشان سے اوپر بہہ رہی ہے، وہیں کوسی ندی بسوا، باگمتی میں ڈوبادھار، کنسار، کٹونجھا اور بینی آباد میں اور کملا بلان ندی جے نگر اور جھن جھار پور ریل پل کے پاس خطرے کے نشان سے اوپر بہہ رہی ہے۔ اس کے علاوہ مہانندا ڈھینگراہا گھاٹ میں خطرے کے نشان سے اوپر ہے۔

About the author

Taasir Newspaper