Pin-Up Казино

Не менее важно и то, что доступны десятки разработчиков онлайн-слотов и игр для казино. Игроки могут особенно найти свои любимые слоты, просматривая выбор и изучая своих любимых разработчиков. В настоящее время в Pin-Up Казино доступно множество чрезвычайно популярных видеослотов и игр казино.

دنیا بھر سے

جنرل قمر باجوہ کا دوغلا پن بے نقاب :عمران خان

Written by Taasir Newspaper

Taasir Urdu News Network – Syed M Hassan 6 th Dec.

اسلام آباد،5دسمبر:سابق وزیراعظم عمران خان نے کہا کہ انہوں نے جنرل باجوا کی مدت ملازمت کی توسیع کرکے سب سے بڑی غلطی کی تھی او رکہا کہ جب جنرل فیض حمید کو آئی ایس آئی کے سربراہ کے عہدے سے ہٹا یا گیا تو اسی وقت یہ عیاں ہوگیا کہ میری حکومت کو بھی فوج گرائے گی ۔ مسٹر عمران خان نے کہاکہ جنرل باجوہ ڈبل گیم کھیل رہے تھے۔ انہوں نے کہا کہ ان کی سب سے بڑی غلطی یہ ہے کہ جنرل باجوہ پر پورا عتماد تھا اور وہ جو بھی کہتے تھے میں اس پر عمل کرتا رہا لیکن میں مجھے یہ اندازہ ہی نہیں تھا کہ وہ میری حکومت کو گرانے کا منصوبہ بنا رہے تھے۔ ایک طرف مجھے اپنے حمایت کی یقین دہانی کررہا تھے تودوسری طرف حکومت گرانے کی سازشیں کررہے تھے انہوں نے یہ بھی کہا کہ خفیہ اداروں نے انہیں بار بار یہ وارننگ دی کہ ان کی حکومت کی کو گرانے کا منصوبہ بنا یا گیا ہے۔ کیونکہ فوجی جنرل نواز شریف کے ساتھ رابطے میں رہے۔ جب ان سے پوچھا گیا کہ مسلم لیگ ق کے رہنما مونس الہٰی نے دعوی کیا کہ سابق فوجی چیف نے انہیں عمران خان کی حکومت کو حمایت کرنے کو کہا تو عمران خان نے کہا کہ یہ سچ ہوسکتا ہے۔ ایک طرف مجھے حمایت کی تو دوسری طرف چودھری شجاعت حسین کو اتحادی جماعتوں کو حمایت کرنے کو کہا ہوگا ۔ انہوں نے کہا کہ تحریک انصاف پارٹی کے ممبروں کو بھی الجھن میں ڈالا گیا ہے۔ عمران خان نے کہا کہ زندگی میں اس نے کبھی بھی ایسی تخریبی ذہن دیکھا اس سے پہلے مونس الہٰی نے کہا کہ جنرل باجوہ نے انہیں عمران خان کے حق میں ووٹ دینے کو کہا لیکن اکثریت میں ہونے کی وجہ سے ان کے خلاف عدم اعتماد کی تحریک منظور ہوئی ۔ اس دوران عمران خان نے یہ اعلان کیا کہ وہ پنجاب اور خیبرپختونخواہ کے اسمبلیوں کو توڑنے کا فیصلہ کیا ہے۔ لیکن اس پر آخری فیصلہ مشاورت کے بعد ہی کیا جائیگا ۔ اس دوران وزیراعظم شہباز شریف نے کہا کہ عمران کی سیاست کا مقصد صرف یہی ہے کہ وہ اپنے اقتدار کے لئے راستہ بنائے۔ کبھی وہ اپنی حکومت گرانے کے لئے غیر ملکی سازش کا راگ الاپتے ہیں تو کبھی فوج کو ۔انہو ںنے کہا کہ وہ مستقل مزاج نہیں ہے اور ہمیشہ یوٹرن ہی لیتے ہیں۔

About the author

Taasir Newspaper