Pin-Up Казино

Не менее важно и то, что доступны десятки разработчиков онлайн-слотов и игр для казино. Игроки могут особенно найти свои любимые слоты, просматривая выбор и изучая своих любимых разработчиков. В настоящее время в Pin-Up Казино доступно множество чрезвычайно популярных видеослотов и игр казино.

ریاست

ضلع انتظامیہ ارریہ انچل آفس کو بدعنوانی سے پاک کرے:- بھاکپا مالے

Written by Taasir Newspaper

Taasir Urdu News Network – Syed M Hassan 27th Dec.

سی او کے خفیہ متوازی دفترمیں ہوتاہے صرف بیچولیا اور مافیا کا کام، “سی او” ارریا کا رویہ غیر ذمہ دارانہ:- مالے۔

 ارریہ:- ( مشتاق احمد صدیقی ) گزشتہ کل سی پی آئی مالے ( بھاکپا مالے ) کے کارکنوں نے ارریہ انچل آفیسر کی بدعنوانی کے خلاف احتجاجی مظاہرہ کرتے ہوئے ارریہ انچل آفس کا گھیراؤ کیا اور سی او ارریہ کی منمانی، بدعنوانی، میوٹیشن کے نام پر لوٹ مار،جنتا دربار کے نام پر چالبازی اور غریب بے زمینوں کو باسگیٹ پرچے جاری کرنے کے مطالبے کو لے کر اپنے کارکنان کے ساتھ جلوس لے کر انچل آفس ارریہ کے کیمپس پہنچے، جہاں جلوس ایک اجلاس میں تبدیل ہوگیا، مالے لیڈر اجیت پاسوان نے اجلاس کی صدارت کی۔ اس موقع پر مالے لیڈر اجیت پاسوان نے کہا کہ سرکل افسر ارریہ کے کام کرنے کے انداز سے عوام مایوس ہیں، کوئی بھی کام بغیر مداخلت کے نہیں ہوتا، ہر جگہ کام دلالوں سے ہوتا ہے، جس کی وجہ سے عوام کو بڑی دقتوں کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے،  سرکل آفس کی بدعنوانی اپنی حدوں کو چھو چکی ہے جبکہ مالے کے فعال اور متحرک رہنما آزاد عالم نے کہا کہ آج کے دور میں ارریہ زون کرپشن میں پہلے نمبر پر ہے اور غریبوں کا کوئی کام بغیر رشوت کے نہیں ہورہاہے، غریبوں کا استحصال انتہا کو پہنچ چکا ہے، انصاف کے لئے بے چارے غریب ارریہ سرکل دفتر کا چکر لگاتے لگاتے تھک چکے ہیں، ان کی ہمت چور چور ہوگئی ہیں، جسے سی پی آئی (مالے) قطعی برداشت نہیں کرے گی۔ شری آزاد عالم نے مزید کہا کہ میوٹیشن( داخل خارج )  کے نام پر بھی دلالوں کے ذریعے پیسے لوٹے اوربٹورے جاتے ہیں، اگر رشوت نہ دی جائے تو طرح طرح کی رکاوٹیں کھڑی کی جاتی ہیں، جس کی وجہ سے عوام کو رشوت دینے پر مجبور ہونا پڑتا ہے۔ اس موقع پر مشتاق الرحمان نے کہا کہ اراضی کے تنازعہ سے متعلق معاملوں کو نپٹانے کےبجائے ارریہ سرکل آفیسر اراضی مافیاؤں کے ساتھ ملی بھگت کرکے معاملے کو مزید طول دیتے ہیں۔  لوگ کام کے مقصد سے سرکل آفیسر سے ملنے آتے ہیں لیکن سرکل آفیسر کودفتر میں نہیں پاتے ہیں، جس کی وجہ سے انہیں مایوسی ہاتھ لگتی ہے  جبکہ ان کا متوازی دفتر بھی خفیہ جگہ پر چلتا ہے جہاں صرف بیچولیا اور مافیا کام کرتے ہیں۔ اپنی باتیں رکھتے ہوئے اندرانند پاسوان نے کہا کہ سی او صاحب غریبوں کے لئے عوامی عدالت کا اہتمام تو کرتے ہیں، لیکن عام لوگوں کو انصاف نہیں ملتا ہے، کیوں کہ ہمارے موجودہ سی او صاحب صرف بڑے لوگوں کے حق میں فیصلے دیتے ہیں۔ جنتا دربار کے نام پر مذاق ہوتاہے جبکہ راجو رشی دیو نے کہا کہ ہمیں بغیر کسی تاخیر کے غریبوں کو باسگیت کے پرچے دینے چاہئیں۔  اس کے ساتھ قائدین نے کہا کہ اگر ارریہ سرکل آفس کا رویہ بروقت نہ بدلا تو آنے والے دنوں میں شدید احتجاج کیا جائے گا۔ اس مظاہرے اور اجلاس میں حیات پور سرپنچ کا نمائندہ نیر عالم، اسماعیل، رحمان، سوگن پاسوان، اشوک پاسوان، سنوج پاسوان، نورصبا، رینا دیوی اور پپو وغیرہ  سمیت بڑی تعداد میں دبے کچلے لوگ موجود تھے۔

About the author

Taasir Newspaper