Pin-Up Казино

Не менее важно и то, что доступны десятки разработчиков онлайн-слотов и игр для казино. Игроки могут особенно найти свои любимые слоты, просматривая выбор и изучая своих любимых разработчиков. В настоящее время в Pin-Up Казино доступно множество чрезвычайно популярных видеослотов и игр казино.

کھیل

چاہے کچھ بھی ہوجائے آپ اپنے بچوں کو تعلیم ضرور دلوائیں۔ کیوں کہ تعلیم سب سے بڑی نعمت ہے۔ ڈاکٹر حافظؔ کرناٹکی

Written by Taasir Newspaper

Taasir Urdu News Network – Syed M Hassan 27th Dec.

آج بروز منگل ۲۷؍دسمبر ۲۰۲۲ء؁ کو شکاری پور سنسکرتی بھون میں گلشن زبیدہ کے سلور جوبلی جشن کا بہت ہی اعلیٰ پیمانے پر انعقاد کیا گیا۔ اس موقع سے ڈاکٹر حافظؔ کرناٹکی کی صدارت میں ایک بہت بامعنیٰ جلسہ منعقد کیا گیا۔ جس میں تعلیمی بیداری اور اساتذہ و سرپرستان طلبا و طالبات کے موضوع پر بہت عمدہ گفتگو کی گئی۔ اس جلسے میں مہمان اعزازی کی حیثیت سے ایچ،کے ملت کالج داونگیرے کے پرنسپل معروف ادیب و شاعر اور ناقد ڈاکٹر بی محمد داؤد محسن نے شرکت کی۔ جنہیں اعزاز سے نوازاگیا۔ مہمان گرامی کی حیثیت سے جناب ہچرایپّا، انجنیر محمد جاویدپاشا، مولانا صفی اللہ قاسمی اور آفاق عالم صدیقی نے شرکت کی۔ ان لوگوں کے علاوہ گلشن زبیدہ کے سبھی اساتذہ اور گلشن زبیدہ کے سبھی شعبوں کے صدور اور بچوں کے والدین نے کثیر تعداد میں شرکت کی۔ گلشن زبیدہ کے روح رواں قومی انعام یافتہ شاعر و ادیب ڈاکٹر حافظؔ کرناٹکی نے اپنے نرسری سے لے کر ہائیر پرائمری تک کے اساتذہ کا اعزاز بھی کیا۔ اور مختلف ادبی، علمی، اور ثقافتی کھیلوں اور کاموں میں حصّہ لے کر انعام حاصل کرنے والے بچوں میں اعزازات اور سند کے ساتھ مومنٹو بھی مہمانوں کے ذریعہ تقسیم کروایا۔ جلسے کا باضابطہ آغاز تلاوت کلام پاک اور حمد و نعت سے ہوا۔ اس خصوصی جلسے میں ایک نشست صوفی گلوکارہ کھنک جوشی کے لیے مختص تھی جس میں انہوں نے حافظؔ کرناٹکی کا صوفیانہ کلام پیش کیا۔ جلسے سے خطاب کرتے ہوئے ڈاکٹر حافظؔ کرناٹکی نے کہا کہ ہمارے اساتذہ بہت محنتی ہیں۔ انہیں کی محنت اور لگن کی وجہ سے ہمارے اسکول کے بچے تعلیمی ترقی کی نئی مثالیں قائم کررہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ نرسری اور ابتدائی جماعت کے بچوں کو سنبھالنا اور پڑھانا نہایت محنت اور مشقت کا کام ہے۔ اس لیے چھوٹی جماعت کے اساتذہ بہرحال شکریہ کے حقدار ہوتے ہیں۔ انہوں نے اپنے خطاب میں کہا کہ اس شہر شکاری پور کے لوگوں نے سچ مچ گلشن زبیدہ سے محبت کی ہے۔ انہیں کی محبت سے ایک چھوٹا سا پودا آج ایک درخت بناہے۔ انہوں نے اس بات پر خاص طور سے زور دیا کہ چاہے کچھ بھی ہوجائے آپ اپنے بچوں کو تعلیم ضرور دلوائیں۔ کیوں کہ تعلیم سب سے بڑی نعمت ہے۔
جناب ہچرایپّا نے کہا کہ ڈاکٹر حافظؔ کرناٹکی مرد کامل ہیں۔ وہ ایک مکمل انسان ہیں۔ انہوں نے اپنی محنت اور لگن سے شکاری پور کے ماحول کو تعلیم کا ایسا رنگ بخش دیا ہے جس کی مثال ملنی مشکل ہے۔
آفاق عالم صدیقی نے کہا کہ لوگ اپنے گاؤں اور شہر کے نام سے پہچانے جاتے ہیں۔ مگر حافظؔ کرناٹکی کی شخصیت اتنی جامع کمالات ہے کہ شکاری پور ان کے نام سے پہچانا جاتا ہے۔ پوری اردو دنیا میں شکاری پور حافظؔ کرناٹکی کے نام کی علامت بن گیا ہے۔ بلکہ لوگ تو اب کرناٹک کو بھی حافظؔ کرناٹکی کے نام سے یاد کرنے لگے ہیں۔ وہ سچ مچ ایسے مالی ہیں جنہوں نے گلشن زبیدہ کو تعلیم کا گلستاں بنادیا ہے۔
انجنیر جاوید پاشا نے کہا کہ حافظؔ کرناٹکی ہمارے بڑے بھائی ہیں۔ ان کے اندر اللہ نے خدمت کرنے کا بے پناہ جذبہ عطا کیا ہے۔ یہی وجہ ہے کہ شکاری پور ایک تعلیمی ہب بن گیا ہے۔
مولانا صفی اللہ قاسمی نے کہا کہ ڈاکٹر حافظؔ کرناٹکی نے بالکل اسلام کی تعلیم کے مطابق علم کی اہمیت سے لوگوں کو آگاہ کیا ہے اور بچوں کی تعلیم و تربیت بھی اسی انداز میں کی ہے۔ ایسی شخصیت خدا کی نعمت ہے۔
دوسرے لوگوں نے بھی گلشن زبیدہ کی تعلیمی خدمات کو سراہا۔ مہمان اعزازی ڈاکٹر بی محمد داؤد محسن نے ڈاکٹر حافظؔ کرناٹکی کی ادبی، علمی اور سماجی خدمات پر روشنی ڈالتے ہوئے کہا کہ ان کی ذات اپنے آپ میں ایک تحریک ہے۔ وہ جس کام میں ہاتھ ڈالتے ہیں اللہ ان کی نیت کے مطابق برکت عطا کرتا ہے۔ اور وہ کام بہت جلد کارنامہ بن جاتا ہے۔ پروگرام میں بچوں نے بھی اپنی خوب صورت اداکاری کے جوہر دکھائے اور ڈاکٹر حافظؔ کرناٹکی کی نظموں اور غزلوں اور حب الوطنی کے نغموں پر خوب صورت عملی مظاہرہ پیش کیا۔یہ خوب صورت پروگرام حافظ ناصر صاحب کی نظامت میں شروع ہوا اور انہیں کے شکریہ کے ساتھ اختتام کو پہونچا۔

About the author

Taasir Newspaper