Pin-Up Казино

Не менее важно и то, что доступны десятки разработчиков онлайн-слотов и игр для казино. Игроки могут особенно найти свои любимые слоты, просматривая выбор и изучая своих любимых разработчиков. В настоящее время в Pin-Up Казино доступно множество чрезвычайно популярных видеослотов и игр казино.

دنیا بھر سے

چین میں کرونا کیسز میں اضافہ، کیا دنیا وبا کی نئی لہر کا سامنا کرنے والی ہے؟

Written by Taasir Newspaper

Taasir Urdu News Network – Syed M Hassan 29th Dec.

بیجنگ،29دسمبر: چین میں کرونا وائرس کے کنٹرول کے لیے نافذ کردہ ‘زیرو کووڈ پالیسی’ کے خاتمے کے ساتھ ہی اچانک وبا کے لاکھوں کیسز سامنے ا?نا شروع ہوگئے ہیں جس کے بعد ماہرین اب خدشہ ظاہر کر رہے ہیں ممکنہ طور پر دنیا کو وبا کی ایک نئی قسم کا سامنا کرنا پڑ سکتا ہے۔چین نے رواں ماہ ہی زیرو کووڈ پالیسی کے خاتمے کا اعلان کرتے ہوئے کہا تھا کہ نئی سال کے دوسرے ہفتے سے غیر ملکی مسافروں کے چین ا?نے پر قرنطینہ کی شرط ختم کر دی جائے گی۔چین کے نیشنل ہیلتھ کمیشن نے وبا سے متاثر ہونے والے افراد یا اموات کے اعداد و شمار کا اجرا بھی بند کر دیا ہے۔ ملک کے کئی علاقوں کے حوالے سے اب بس اندازے ہی لگائے جا رہے ہیں کہ حالیہ ہفتوں میں وہاں سینکڑوں اور ہزاروں افراد کرونا سے متاثر ہو رہے ہیں۔چین کے یہ اقدامات ان پابندیوں کے برعکس ہیں جو کہ کرونا وبا کے ا?غاز پر اختیار کی گئی تھیں۔زیرو کووڈ پالیسی کے خاتمے کے بعد مختلف اسپتالوں اور مردہ خانوں میں انتہائی رش کی بھی اطلاعات سامنے ا? رہی ہیں جب کہ ماہرین اب ان خدشات کا شکار ہیں کہ چین اب وبا کی نئی اقسام کو بڑھاوا دینے کا مرکز بن سکتا ہے۔کرونا وبا سے اب تک دنیا کی ا?بادی کے لگ بھگ پانچویں حصے کے متاثر ہونے کے خدشات جنم لے رہے ہیں جب کہ ان میں زیادہ تر وہ لوگ متاثر ہو سکتے ہیں جن کا مدافعتی نظام وبا کی گزشتہ اقسام کا مقابلہ کرنے کی استعداد نہیں رکھتا تھا جب کہ ان لوگوں میں سے بڑی تعداد اب بھی ویکسین لگوانے سے محروم ہے۔عالمی ادارہ صحت (ڈبلیو ایچ او) کی چیف سائنٹسٹ سومیہ سوامیناتھن کا کہنا ہے کہ چین کی آبادی کا ایک بڑا حصہ وبا کے خلاف مدافعت کے قابل نہیں ہے کیوں کہ وہاں بڑی عمر کے افراد بہت زیادہ ہیں جب کہ ان میں سے بھی اکثریت کو کرونا کی ویکسین نہیں دی گئی یا انہیں بوسٹر شاٹس نہیں لگائے گئے۔ان کے مطابق چین کی صورتِ حال پر نظر رکھنا ہوگی کہ وہاں سے وبا کی نئی اقسام تو جنم نہیں لے رہیں۔چین میں کرونا وائرس کے کیسز میں اچانک ہونے والے اضافے کے سبب کئی ممالک نے حفاظتی اقدامات بھی شروع کر دیے ہیں۔

About the author

Taasir Newspaper