Pin-Up Казино

Не менее важно и то, что доступны десятки разработчиков онлайн-слотов и игр для казино. Игроки могут особенно найти свои любимые слоты, просматривая выбор и изучая своих любимых разработчиков. В настоящее время в Pin-Up Казино доступно множество чрезвычайно популярных видеослотов и игр казино.

ملک بھر سے

ڈی یو کی نابالغ طالبہ سے عصمت دری

Written by Taasir Newspaper

Taasir Urdu News Network – Syed M Hassan 24th Jan.

نئی دہلی،24جنوری : دہلی یونیورسٹی میں زیر تعلیم ایک نابالغ طالبہ نے الزام لگایا ہے کہ اس کے جاننے والے نے پہلے اسے نشہ آور چیز پلا کر ریپ کیا۔ پھر قابل اعتراض ویڈیوز اور تصاویر بنائیں۔ احتجاج کرنے پر بلیک میلنگ شروع کر دی۔ اب طالبہ سے ملزم نوجوان بلیک میلنگ کے ذریعے اس کا مذہب تبدیل کرکے شادی کے لیے دباؤ ڈال رہا ہے۔ جب طالب علم نے اس کی بات ماننے سے انکار کیا تو 22 جنوری کی رات اس نے طالبہ کے گھر پر پتھر اور انڈے پھینکے۔ متاثرہ اور اہل خانہ نے پولیس کو فون کیا۔ تھانہ جہانگیرپوری کی پولیس پہنچ گئی۔ متاثرہ کی شکایت پر پولیس نے آئی پی سی کی دفعہ 328/376 اور پوکسو ایکٹ کے تحت 6 کے تحت مقدمہ درج کیا ہے۔ پولیس مفرور ملزمان کی تلاش کر رہی ہے۔پولیس افسر نے پورے واقعے کی تصدیق کر دی ہے۔ دراصل پی سی آر کال اتوار-پیر کی درمیانی رات کو موصول ہوئی تھی۔ متاثرہ لڑکی نابالغ ہے اور ڈی یو کالج میں زیر تعلیم ہے۔ متاثرہ نے بیان دیا کہ جہانگیرپوری کا رہائشی شکیب کچھ عرصہ قبل ایک مشترکہ دوست کے ذریعے اس سے رابطہ میں آیا۔ مسلسل بات چیت کے بعد قربت بڑھ گئی۔ الزام ہے کہ شکیب اور وہ دوست کی طرح رابطے میں رہے۔ اسی دوران شکیب نے اسے جہانگیر پوری میں اپنے گھر بلایا۔ وہاں کوئی اور موجود نہیں تھا۔ وہاں ملزم نے اسے جوس پلایا جس کے بعد وہ بے ہوش ہوگئی۔ جب مجھے ہوش آیا تو مجھے معلوم ہوا کہ ملزم نے اس کے ساتھ زیادتی کی ہے۔ یہی نہیں اس نے نابالغ طالب علم کا ویڈیو بھی بنایا اور تصویریں بھی لیں۔متاثرہ لڑکی کا الزام ہے کہ اس کے بعد ملزم شکیب نے ویڈیو وائرل کرنے کی دھمکی دے کر دو تین بار زیادتی کی۔ ساتھ ہی دھمکی دی کہ اگر اس نے انکار کیا تو اس کے نتائج صحیح نہیں ہوں گے۔ متاثرہ لڑکی نے پولیس کو بتایا کہ اب ملزم اس پر مذہب تبدیل کرنے اور اس سے شادی کرنے کے لیے دباؤ ڈال رہا ہے۔ کچھ دنوں سے اس نے ملزم سے بات کرنا بالکل بند کر دیا ہے جس کے بعد اتوار کی رات اس نے گھر پر انڈے اور پتھر پھینکے۔ ملزم کی اس حرکت پر اس نے اپنے والدین کو سب کچھ بتا دیا۔ اس کے بعد اس کے والدین نے پولیس کو بلایا۔ مقدمہ درج ہونے کے بعد سے ملزم فرار ہے۔ پولیس ممکنہ ٹھکانوں پر چھاپے مار رہی ہے۔ پولیس افسر کا کہنا ہے کہ ملزمان کو جلد گرفتار کر لیا جائے گا۔

About the author

Taasir Newspaper