ایم پی میں کیجریوال نے پھونکا انتخابی بگل۔ کہا- ایک موقع دے دو، بجلی، تعلیم، علاج سب مفت کر دوں گا

Taasir Urdu News Network – Syed M Hassan 14th March

بھوپال، 14 مارچ : دہلی کے وزیراعلیٰ اروند کیجریوال نے کہا کہ مدھیہ پردیش میں حکومتیں بیچی اور خریدی جاتی ہیں۔ یہاں ایم ایل اے کی خرید و فروخت پر ڈسکاو?نٹ بھی ملتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ دہلی- پنجاب میں ہماری حکومت نے بجلی، علاج اور اسکول تعلیم مفت کر دی ہے۔ مدھیہ پردیش میں بھی موقع دیں، یہاں بھی سب کچھ مفت کر دیں گے۔ انہوں نے کہا کہ اگر کام نہیں کیا تو دوبارہ ووٹ مانگنے نہیں ا?و?ں گا۔ کیجریوال منگل کو بھوپال کے بی ایچ ای ایل دسہرہ میدان میں منعقد ایک بہت بڑے جلسہ عام سے خطاب کر رہے تھے۔ اس موقع پر پنجاب کے وزیر اعلیٰ بھگونت مان بھی موجود تھے۔
دراصل، عام ا?دمی پارٹی (عا?پ) اس سال کے ا?خر میں مدھیہ پردیش میں ہونے والے اسمبلی انتخابات میں پوری طاقت کے ساتھ لڑنے کی تیاری کر رہی ہے۔ عا?پ یہاں کی تمام 230 اسمبلی سیٹوں پر اپنے امیدوار کھڑے کرے گی۔ پارٹی کے قومی صدر اور دہلی کے وزیر اعلیٰ اروند کیجریوال اور پنجاب کے وزیر اعلیٰ بھگونت مان نے منگل کو بی ایچ ای ایل دسہرہ میدان میں منعقدہ جلسے میں انتخابی بگل پھونکا۔ کیجریوال اور مان دوپہر 3.00 بجے بھوپال پہنچے۔ پارٹی کے نیشنل ا?رگنائزیشن جنرل سکریٹری اور راجیہ سبھا ممبر سندیپ پاٹھک، ایم ایل اے بھوپیندر سنگھ جون، ریاستی انچارج مکیش گوئل سمیت ریاست بھر سے ہزاروں پارٹی کارکنان جلسہ میں شریک ہوئے۔
کیجریوال نے مجمع سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ لوگ کہہ رہے ہیں کہ مدھیہ پردیش کا سب سے بڑا مسئلہ ماما کا ہے۔ ایم پی میں حکومتیں خریدی اور بیچی جاتی ہیں۔ انتخابات کے بعد ایک پارٹی ایم ایل اے کو بیچتی ہے اور دوسری انہیں خریدتی ہے۔ کانگریس یا بی جے پی کو ووٹ دیں۔ حکومت ماما کی بنتی ہے۔ اس بار جھاڑو کو ووٹ دینے سے مسئلہ ختم ہو جائے گا۔ انہوں نے کہا کہ انہوں نے سنگرولی میں ٹریلر دیکھا تھا اور اب فلم دکھائیں گے۔ کانگریس اور بی جے پی کو 45 سال اور 20 سال تک موقع دیا گیا لیکن کچھ نہیں کیا۔ اس بار عا?پ کو ووٹ دیکر دیکھ لو، کام نہیں کیا تو واپس ووٹ مانگنے نہیں ا?و?ں گا۔
انہوں نے کہا کہ دہلی والوں نے مجھے 49 دن کا موقع دیا تھا، پھر پیار ہو گیا۔ دہلی کی بات پنجاب تک پہنچی تو وہاں بھی ہماری حکومت بن گئی۔ مجھے ایک موقع دیں میں مفت بجلی دوں گا۔ اسکول کی ہیئت بدل دوں گا۔ مدھیہ پردیش کے لوگ ایک موقع دیں اور دیکھیں میں بچوں کا مستقبل بناو?ں گا۔ دہلی میں 50 لاکھ تک کا مفت علاج ہوتا ہے۔
اگر ایم پی نے موقع دیا تو انہیں بھی مفت علاج دوں گا۔ دہلی میں 12 لاکھ، پنجاب میں 27 ہزار کو نوکریاں دیں۔ اگر مدھیہ پردیش کے نوجوان موقع دیں تو وہ سب کو نوکریاں دیں گے۔ ملازمین کو ریگولر کریں گے۔ پہلے مذہب کی سیاست تھی، ہم نے کام کی سیاست شروع کی۔ ا?زادی کے بعد سے کسی نے اسکول نہیں بنائے۔ ہم جانتے ہیں کہ کس طرح کام کرنا ہے۔ گجرات میں داخل ہوگئے ہیں اور 2027 میں حکومت بنائیں گے۔ ستیندر جین نے مفت بجلی دی۔ محلہ کلینک بنائیں۔ منیش سسودیا نے سرکاری اسکولوں میں کمال کر دیا۔ ایک شاندار عمارت ہے۔ لوگ پرائیویٹ اسکولوں سے بچوں کو نکال کر سرکاری اسکولوں میں ڈال رہے ہیں۔ وزیراعظم نے دونوں کو جیل بھیج دیا۔ ملک کا وزیر اعظم کم پڑھا لکھا ہو گا تو کوئی بھی اسے بے وقوف بنائے گا۔ افسر جو کہے گا وہی کریں گے۔