اسرائیلی فوج نے غزہ میں یرغمالی فوجی کی ہلاکت کی تصدیق کر دی

تاثیر۲۵      جون ۲۰۲۴:- ایس -ایم- حسن

تل ابیب، 25جون:اسرائیلی فوج نے اس بات کی تصدیق کر دی ہے کہ اس کے ایک فوجی کی لاش حماس کے پاس غزہ میں موجود ہے۔ یہ بات پیر کے روز اسرائیلی فوجی ترجمان نے اپنے اس فوجی کے بارے میں کہی ہے کہ اسے سات اکتوبر کے حماس حملے میں فوجی کو قتل کرنے کے بعد اس کی لاش کی غزہ منتقل کر دی تھی۔اس سے ہٹ کر ایک اور بیان میں اسرائیلی یرغمالیوں کے اہلخانہ کے گروپ کی طرف سے اس امر پر اصرار کیا گیا ہے کہ الترش نامی فوجی کی ہلاکت کی تصدیق پر اس کے اہلخانہ کے ساتھ اظہار یکجہتی کے لیے کھڑے ہیں اور ان کے ساتھ کھڑے رہیں گے جب تک کہ ہلاک شدہ فوجی کی باقیات اس کے گھر والوں کو واپس نہیں ملتی۔خیال رہے اسرائیلی فوج کا کہنا ہے کہ غزہ میں قید یرغمالیوں میں سے 42 کی ہلاکت ہو چکی ہے۔ جبکہ ان میں سے نو ہلاک شدگان اسرائیلی فوجی ہیں۔ اسرائیلی فوج نے اب تک غزہ میں 37626 فلسطینیوں کو ہلاک کیا ہے۔ جبکہ سینکڑوں کو غزہ جنگ کے دوران غزہ سے اٹھا لیا گیا ہے یا لاپتہ کر دیا گیا ہے۔