جنوبی کوریا میں بیٹری فیکٹری میں آتشزدگی کے نتیجے میں 20 افراد جاں بحق

تاثیر۲۴      جون ۲۰۲۴:- ایس -ایم- حسن

سیئول،24جون:جنوبی کوریا میں ذرائع ابلاغ نے بتایا ہے کہ ایک بیٹری فیکٹری میں لگنے والی آگ کے بعد بیس افراد کی لاشیں نکالی گئی ہیں۔یونہاپ نیوز ایجنسی کے مطابق پیر کو جنوبی کوریا میں ایک بیٹری فیکٹری میں آگ لگنے کے بعد تقریباً 20 افراد کی لاشیں ملی ہیں۔جائے وقوعہ پر آگ بجھانے والی ٹیم کے ایک رکن کم جن ینگ نے نامہ نگاروں کو بتایا کہ فی الحال اکیس مزدور لاپتہ ہیں۔ ہم کمپنی کی طرف سے فراہم کردہ رابطوں کے ذریعے ان کا پتہ لگانے کی کوشش کررہے ہیں‘‘۔انہوں نے حادثے کے فوری بعد ریسکیو آپریشن شروع کرنے کا اعلان کرتے ہوئے کہا کہ “ہم ابھی تک متاثرہ فیکٹری میں داخل ہونے اور امدادی کارروائیاں کرنے سے قاصر ہیں۔ آگ پر قابو پانے کے بعد ہم ایسا کریں گے”۔
آگ سیئول کے جنوب میں ہواسیونگ میں جنوبی کوریا کی کمپنی ایریسل کی ملکیت لیتھیم بیٹری فیکٹری میں لگی۔ خبر رساں ایجنسی کی طرف سے نشر کی گئی تصاویر میں فیکٹری کی عمارت کے اوپر سرمئی دھوئیں کیبادل اٹھتے ہوئے دکھائی دے رہے ہیں۔جنوبی کوریا کے صدر یون سک یول نے مقامی حکام کو ہدایت کی تھی کہ وہ آتش زدگی کے بعد لاپتا افراد کی تلاش اور ریسکیو پر توجہ دینے کے لیے تمام دستیاب اہلکاروں اور آلات کو متحرک کریں”۔