دم توڑ رہی ہے روہتاس ضلع میں پی ایم ای جی پی اسکیم،457 میں50 درخواستیں ہوئیں منظوری

تاثیر۲۵      جون ۲۰۲۴:- ایس -ایم- حسن

       سہسرام ( انجم ایڈوکیٹ ) روہتاس ضلع میں پی ایم ای جی پی (وزیر اعظم ایمپلائمنٹ جنریشن پروگرام) اسکیم دم توڑ رہی ہے، جسکی وجہ سے ہدف پورا نہ ہونے کے ساتھ ساتھ خود روزگار کے حوالے سے بھی لوگ کافی متاثر ہو رہے ہیں ۔ حکومت کی جانب سے چلائی جانے والی اسکیموں کا فائدہ لوگوں کو نہیں مل رہا ہے ۔  کلکٹریٹ کمپلیکس میں واقع ڈی آر ڈی اے بھون آڈیٹوریم میں منعقدہ صنعت سے متعلق میٹنگ میں اس کا انکشاف ہوا، جب انچارج ڈی ایم کم ایڈیشنل کلکٹر کم ایڈیشنل ڈسٹرکٹ مجسٹریٹ چندر شیکھر پرساد نے میٹنگ میں پی ایم ای جی پی کی منظور شدہ درخواستوں کا جائزہ لیا، اس دوران معلوم ہوا کہ مذکورہ اسکیم کے تحت بینکوں نے صرف 50 درخواستیں منظور کی ہیں جبکہ درخواست دینے والوں کی تعداد سینکڑوں سے تجاوز کر گئی ہے ۔ اس اسکیم کا ہدف 457 ہے ۔ اس طرح مذکورہ اسکیم کے ہدف کے مقابلہ میں بینکوں کی جانب سے 50 درخواستیں منظور کی گئی ہیں ۔  یہی نہیں، ایم ایف ایم ای (پردھان منتری مائیکرو فوڈ پروسیسنگ انڈسٹریز اسکیم) کی حالت اور بھی خراب ہے، اس اسکیم کے جائزے کے دوران پتہ چلا کہ پی ایم ایف ایم ای میں 340 کے ہدف کے مقابلے میں صرف 18 درخواستیں منظور کی گئی ہیں، اس کے بعد انچارج ضلع مجسٹریٹ کم ایڈیشنل کلکٹر نے سخت ہدایت دی کہ زیادہ سے زیادہ لوگوں کو قرض فراہم کرنے کیلئے خصوصی کیمپ کا انعقاد کیا جائے، انہوں نے کہا کہ اس بات کو یقینی بنایا جائے کہ زیادہ سے زیادہ لوگوں کو قرض کی منظوری کیلئے کیمپ لگائے جائیں، ساتھ ہی بینک اپنا کام تیز رفتاری سے کرے ورنہ کارروائی کی جائیگی، انہوں نے کہا کہ حکومت نے جو ہدف مقرر کیا ہے اسے ہر صورت پورا کرنا ہو گا بصورت دیگر کارروائی کی جائیگی ۔ میٹنگ میں ڈی ڈی سی وجئے کمار پانڈے، انڈسٹری جنرل منیجر آشیش رنجن، لیبر سپرنٹنڈنٹ، لیڈنگ بینک کے ریجنل منیجر، برانچ منیجر وغیرہم موجود تھے ۔