پرشانت کشورنئی سیاسی پارٹی بنائیں گے

تاثیر۱۲      جون ۲۰۲۴:- ایس -ایم- حسن

پٹنہ، 12 جون:جن سوراج کے بانی اور سیاسی حکمت عملی ساز پرشانت کشور، جو گزشتہ 18 مہینوں سے پیدل مارچ کر رہے ہیں، نے بدھ کو کہا کہ بہار کی 50 فیصد سے زیادہ آبادی چاہتی ہے کہ ایک نئی پارٹی بنائی جائے۔ لوگ چاہتے ہیں کہ اگر بہار میں بہتری لانی ہے تو ریاست میں نئی پارٹی یا نیا آپشن بننا چاہیے۔ کیونکہ عوام پچھلے 30 سالوں سے لالو، نتیش اور بی جے پی سے تنگ آچکے ہیں۔ لوگ دیکھ رہے ہیں کہ ان کی زندگیوں میں کوئی بہتری نہیں آ رہی، لیکن لوگوں کو کوئی راستہ نہیں مل رہا کہ ووٹ کسے دیں۔انہوں نے مزید کہا کہ 2 اکتوبر 2024 کو جن سوراج پارٹی بنائی جائے گی۔ پرشانت کشور نے کہا کہ ایک عام آدمی اکیلے پارٹی نہیں بنا سکتا۔ ایسے میں جن سوراج عوام کی طاقت کو متحد کرنے اور مل کر وہ آپشن بنانے کی مہم ہے جس کی تلاش ہر شخص کر رہا ہے۔ جو کام ہم نے اپنی زندگی میں دس سال کیے ہیں، پہلے ہم پارٹیوں اور لیڈروں کو مشورہ دیتے تھے کہ وہ اپنی پارٹی کو کیسے منظم کریں، الیکشن کیسے لڑیں اور جیتیں۔ جو کام ہم پہلے پارٹی اور لیڈر کے لیے کرتے تھے، اب وہی کام بہار کے لوگوں کے لیے کر رہے ہیں کہ کس طرح آپ سب مل کر نئی پارٹی بنائیں۔سیاسی حکمت کار کا مزید کہنا تھا کہ میرے مشورے سے لیڈر جیت گئے اور لیڈروں کے بچے جیت گئے۔ اب مجھے ذاتی طور پر یقین ہے کہ میرے مشورے سے بہار کے لوگ جیت جائیں گے اور ان کی زندگیوں میں بہتری آئے گی۔ جس طرح آپ دہی کو متھتے ہیں اور مکھن نکالتے ہیں، اسی طرح دوسال میں سماج اور بہار کو متھ کر ایسے لوگوں کو نکالیں گے جنہیں آپ کے آشیرواد اور ووٹوں سے فتح دلائی جائے اور عوام کی حکومت بنایا جائے۔