اچھے کاموں میں رکاوٹیں کھڑی کرنا اور گمراہ کرنا کچھ لوگوں کی فطرت : وزیراعلیٰ

تاثیر۱۰  جولائی ۲۰۲۴:- ایس -ایم- حسن

لکھنؤ، 10 جولائی : اتر پردیش کے وزیر اعلیٰ یوگی آدتیہ ناتھ نے بدھ کو یہاں لوک بھون میں منعقدہ ایک پروگرام کے دوران 7720 نئے تعینات لیکھ پالوں کو تقرری نامے تقسیم کئے۔
اس موقع پر وزیر اعلیٰ یوگی آدتیہ ناتھ نے کہا کہ بی جے پی حکومت میں بھرتی شفاف طریقے سے ہو رہی ہے، لیکن پچھلی حکومتوں میں بھرتی نکلتے ہی ایک خاندان کا پورا کنبہ وصولی کے لئے نکل پڑتا تھا۔
وزیر اعلیٰ یوگی نے کہا کہ محکمہ ریونیو کے ذریعہ 2022 کی بھرتی سبارڈینیٹ سروس سلیکشن کمیشن کے ذریعہ مکمل کی گئی ہے۔ بعض لوگوں کی فطرت ہوتی ہے نیک کاموں میں رکاوٹیں پیدا کرنا اور گمراہ کرنا۔ انہوں نے اس کام میں بھی رکاوٹیں کھڑی کیں لیکن سبارڈینیٹ سروس سلیکشن کمیشن سپریم کورٹ تک گیا اور آج یہ تقرری خط تقسیم کیے جا رہے ہیں۔ وزیر اعلیٰ یوگی نے کہا کہ یہ عمل مکمل ہونے کے بعد ریاست میں 30837 لیکھ پالوں کی تقرری کا عمل مکمل ہو جائے گا۔ تقرری کا عمل گزشتہ 7 سالوں سے حکومت کی جانب سے منصفانہ طریقے سے جاری ہے۔ اس کی وجہ سے 6 لاکھ سے زیادہ نوجوان ریاست کی ترقی میں اپنا حصہ تعاون دے رہے ہیں۔
انہوں نے کہا کہ صرف محکمہ پولیس نے 1 لاکھ 55 ہزار نوجوانوں کو بھرتی کیا۔ نوجوانوں کو بغیر کسی امتیاز کے اور ریزرویشن کے اصولوں پر عمل کرتے ہوئے ان کی میرٹ کے مطابق بھرتی کیا جا رہا ہے۔ 2017 سے پہلے بھرتی کے عمل میں ہول تھے۔ ایک خاندان اضلاع کو آپس میں تقسیم کر لیتا تھا۔ چچا اور بھتیجا وصولی پر نکل جاتے تھے۔ لیکن آج نوجوانوں کا تقرری کے عمل کے منصفانہ ہونے پر اعتماد بڑھ گیا ہے۔ نوجوانوں کا اعتماد ہی ہماری طاقت ہے۔ یہ وہی ریاست ہے، جب یہاں کے نوجوان باہر جاتے تھے تو پہلے ہی ان کی چھٹنی کر دی جاتی تھی۔ آج نوجوانوں کااحترام ہوتا۔ لوگ سمجھ گئے ہیں کہ یہ نیا اتر پردیش ہے، نئے نوجوان ہیں۔ پہلے کی حکومتوں کی نیتیں صاف نہیں تھیں۔ اقربا پروری تھی، عدالت سے اسٹے بھی تھے۔ پیسہ سرکاری دلالوں اور ان کے جیبوں تک پہنچتا تھا۔ اب حالات بدل چکے ہیں۔ اس موقع پر وزیر خزانہ اور پارلیمانی امور سریش کھنہ کے ساتھ سرکاری افسران بھی موجود تھے۔