بی جے پی لیڈر پپو جھا کی لاش مشکوک حالت میں ملی ، نرپت گنج کے ایم ایل اے نے قتل کا خدشہ ظاہر کیا

تاثیر۴      جولائی ۲۰۲۴:- ایس -ایم- حسن

ارریہ ، 04 جولائی:ارریہ بی جے پی کے سابق ضلع نائب صدر راجیو کمار جھا عرف پپو جھا کی لاش ٹاو?ن تھانہ علاقے کے شیو پوری علاقے میں ایک گھر کے اندر سے مشتبہ حالت میں ملی ہے۔
بی جے پی لیڈر کی لاش کی اطلاع ملتے ہی بڑی تعداد میں بی جے پی لیڈر اور کارکن موقع پر پہنچے اور قتل کا خدشہ ظاہر کرتے ہوئے ایس پی کو موقع پر بلانے کا مطالبہ کرنے لگے۔ جس کے بعد ایس پی امیت رنجن پولیس افسران کے ساتھ موقع پر پہنچے اور معاملے کی معلومات حاصل کی اور ا?س پاس کے علاقوں کا تفصیلی جائزہ لیا۔
نرپت گنج کے ایم ایل اے جئے پرکاش یادو اور سابق ضلع صدر سنتوش سورانا سمیت بڑی تعداد میں پہنچے بی جے پی لیڈروں نے سیڑھی کے قریب لاش کو مشکوک حالت میں دیکھ کر قتل کا خدشہ ظاہر کیا۔ واقعے کی اطلاع ملتے ہی ڈی ا?ئی یو کی ٹیم کے ساتھ سٹی تھانہ اور ایف ایس ایل کی ٹیم بھی موقع پر پہنچ گئی اور جائے وقوعہ کے اطراف سے نمونے اکٹھے کئے۔
راجیو کمار جھا عرف پپو جھا طویل عرصے سے بی جے پی سے جڑے ہوئے تھے، اصل میں جہاں پور ارریہ کا رہنے والا ہے، انہوں نے بھی جھا نگر تھانہ علاقے کے شیو پوری علاقے میں اپنا مکان بنایا تھا۔ لیکن گھر سے کچھ ہی فاصلے پر گپتا کے گھر سے اس کی لاش ملی، گھر کا مین گیٹ اندر سے بند تھا۔
آس پاس کے لوگ کل رات گھر میں بہت سے لوگوں کی موجودگی، پارٹی منانے اور شور مچانے کے بارے میں خاموش لہجے میں بات کر رہے ہیں۔
نرپت گنج کے ایم ایل اے جئے پرکاش یادو نے مشتبہ حالت میں لاش ملنے کے بارے میں بات کرتے ہوئے کہا کہ پپو جھا بی جے پی کے بہت پرانے کارکن تھے اور انہوں نے تنظیم میں کئی اہم عہدوں پر فائز ہو کر اپنی ذمہ داریاں پوری کی تھیں۔ ایسے میں وہ ایک وقف کارکن تھے، اس طرح کی موت ضلع میں بی جے پی کے خاندان کے لیے ایک غیر معمولی نقصان ہے۔