شانتی پرساد جین کالج سہسرام کے شعبہ سیاسیات میں منایا گیا عبد القیوم انصاری کا جشن ولادت

         سہسرام ( انجم ایڈوکیٹ ) آج سہسرام  کے شانتی پرساد جین کالج کے پی جی شعبہء سیاسیات میں ڈیڑھ بجے دن میں بھارت کے عظیم سپوت ‘ ممتاز وطن دوست رہنما اور اردو کے صحافی و شاعر اور مسلم لیگ و مسٹر محمد علی جناح کے زبردست مخالف ‘ قومی ایکتا کے مضبوط سپہ سالار عبد القیوم انصاری صاحب کا جشنِ ولادت تقریب کا اہتمام کیا گیا جسکی صدارت و نظامت شعبہء صدر پروفیسر(ڈاکٹر ) محمد علاءالدین انصاری عزیزی نے فرمائی ۔ مذکورہ تقریب کے موقع پر مقررین نے مانگ رکھی کہ انصاری صاحب کے ڈہری آن سون والی عمارت کو تاریخی میموریل بنایا جائے جو انکی ملکی خدمات اور حب الوطنی کے تئیں سچی خراج عقیدت ہو اور ان کے نام پر ایک یونیورسٹی کھولنے کے واسطے بہار سرکار پر دباؤ بنایا جائے ۔ کچھ لوگوں نے اپنا اظہارِ خیال پیش کیا کہ مرحوم انصاری صاحب کو بھارت رتن سے نوازنے کے مقصد سے بھارت سرکار سے گزارش کی جائے ۔
مذکورہ جشنِ سالگرہ کے شروع میں اپنے افتتاحی خطاب میں ڈاکٹر علاءالدین عزیزی نے بہت تفصیل میں قیوم صاحب کی حیات و خدمات پر اظہارِ خیال کیا ۔ انگلش ڈپارٹمنٹ کے صدر پروفیسر راجیش کمار سنہا ‘ علمِ نباتات کی صدر پروفیسر عذرہ پروین اور علمِ سیاسیات کے گیسٹ فیکلٹی ڈاکٹر رنجے کمار ریڈّی نے فرمایا کہ قیوم انصاری جیسے عظیم المرتبت انسان  بہت زمانے کے بعد جنم لیتے ہیں، وہ ہمارے مثالی دیانت دار رہبر و رہنما ہیں، حاضرین میں شعبہء اردو کے صدر ڈاکٹر محمد انعام الحق ‘ سیاسیات کے گیسٹ ٹیچر ڈاکٹر ابھیشیک رنجن ‘ تاریخ کے گیسٹ ٹیچر ڈاکٹر سنجئے کمار ‘ علمِ حیوانات کی گیسٹ فیکلٹی ڈاکٹر سُگندھا پریا ‘ نباتات کی گیسٹ ٹیچر ڈاکٹر سُویتا کماری ‘ کامرس کے گیسٹ ٹیچران ڈاکٹر گورو پاسوان و اشوک کمار  ‘ اکاؤنٹ سیکشن کے شکیل اختر وغیرہ کے نام قابلِ ذکر ہیں ۔