فلم’گاندھی- گوڈسے‘ کے فلاپ ہونے سے راج کمار سنتوشی مشکل میں

تاثیر۹  جولائی ۲۰۲۴:- ایس -ایم- حسن

ممبئی 9 جولائی :بالی ووڈ کے مشہور فلم پروڈیوسر، ہدایت کار اور ہندی فلم کے اسکرین رائٹر راجکمار سنتوشی بڑی مشکل میں پھنس گئے ہیں۔ میڈیا رپورٹس کے مطابق راجکمار سنتوشی، جن کی حال ہی میں ریلیز ہونے والی فلم ‘گاندھی- گوڈسے ایک یودھ’ باکس آفس پر اچھی کارکردگی کا مظاہرہ نہیں کر سکی، انہیں بھاری نقصان اٹھانا پڑا۔ اس کے علاوہ سنتوشی پر فلم کے شریک پروڈیوسر جھولن پرساد گپتا کا چیک باونس کرنے کا بھی الزام ہے۔ اس لیے راجکمار کے خلاف وارنٹ جاری کیا گیا ہے۔
راجکمار سنتوشی چیک باونس کیس میں عدالت کی طرف سے دی گئی کسی بھی تاریخ پر عدالت میں حاضر نہیں ہوئے۔ اس لیے سنتوشی کے خلاف وارنٹ جاری کیا گیا۔ میڈیا رپورٹس کے مطابق اس کیس میں ان کی گرفتاری کے امکان کو رد نہیں کیا جا سکتا۔ موصولہ اطلاعات کے مطابق پروڈیوسر جھولن نے این آئی کی دفعہ 138 کے تحت مقدمہ درج کرایا ہے۔ راجکمار سنتوشی کی طرف سے جھولن کو دیا گیا ایک کروڑ روپے کا پورا چیک باونس ہو گیا ہے۔ سنتوشی کے خلاف عدم ادائیگی کی شکایت درج کرائی گئی ہے۔
پروڈیوسر کا کیا ہے کہنا!!
میڈیا رپورٹس کے مطابق اس سلسلے میں جھولن پرساد گپتا نے’’ راجکمار سنتوشی بالی ووڈ فلم ڈائریکٹر کے طور پر جانے جاتے ہیں لیکن میں ایک شخص کے طور پر ان کے بارے میں نہیں جانتا تھا۔ میں نہیں جانتا تھا کہ میرے پیسے مانگنے پر وہ مجھے واپس نہیں کریں گے۔ سب سے بری بات یہ تھی کہ انہوں نے مجھے جو چیک دیا ،وہ باونس ہو گیا۔ اس لیے میں ہندوستانی نظام انصاف پر اعتماد کے ساتھ عدالت گیا۔‘‘ پروڈیوسر نے مزید کہا، ’’یہ سمن اور نوٹس راجکمار سنتوشی کے خلاف دی گئی تاریخوں پر عدالت میں حاضر نہ ہونے پر جاری کیا گیا ہے۔ مجھے عدالت سے انصاف ملنے کی پوری امید ہے۔‘‘ ایسے میں سب کی نظریں اس بات پر لگی ہوئی ہیں کہ اس معاملے میں آگے کیا ہوگا؟ اس کے علاوہ پولیس راج کمار سنتوشی کے خلاف کیا کارروائی کرے گی۔