نائیڈو کو7منڈل واپس کرنے کے لئے راضی کریں : ہریش راؤ

تاثیر۴      جولائی ۲۰۲۴:- ایس -ایم- حسن

حیدرآباد، 4۔ جولائی: بی آرایس کے سینئرقائد ہریش رائو نے وزیراعلی ریونت ریڈی سے مطالبہ کیا کہ وہ اے پی کے وزیراعلی چندرابابونائیڈوسے ان سات منڈلوں اور460میگاواٹ کے حامل لوئرسلیروہائیڈل پروجیکٹ کوواپس کرنے کیلئے راضی کریں جسے مئی2014 میں زبردستی تلنگانہ سے اے پی منتقل کیا گیاتھا۔ہریش راؤنے تلنگانہ بھون میں ایک پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے گزشتہ سات ماہ سے حکومت کی انتظامی ناکامیوں کواجاگرکیا۔انہوں نے کہاکہ چندرابابوکے دورحکومت میں سات منڈلوں کاآندھراپردیش میں انضمام اورلوئرسلیروپروجیکٹ کوآندھراپردیش کے حوالہ کرنے جیسے مسائل کونظراندازکیاگیاہے۔انہوں نے کانگریس حکومت پرزوردیاکہ وہ چندرابابوپردباؤ ڈالے کہ وہ ریاست کی تقسیم کے دیگر مسائل پر بات کرنے سے پہلے ان مسائل کو حل کریں۔ہریش راونے کہاکہ کانگریس دورحکومت میں گاؤں اور قصبوں میں نظم ونسق ٹھپ ہوگیاہے۔
انہوں نے مزیدکہاکہ کے سی آرنے ‘پلے پرگتی’اور‘پٹنہ پرگتی’کی شروعات کی تھی۔ تاہم اب حالات بدترہوچکے ہیں کیاشہرکیا دیہات ہرجگہ صفائی کی صورتحال ابترہوچکی ہے اور حکومت غیر کارکردنظرآرہی ہے۔ ہریش راونے کہاسرپنچوں اورضلع پریشدوں کی مدت ختم ہونے کے باوجود انتخابات منعقدنہیں کئے گئے۔ کانگریس کی حکمرانی میں دیہات بد نظمی کاشکارہیں۔
انہوں نے کہاکہ بی آرایس دورحکومت میں گاؤں میں بے مثال ترقی دیکھی گئی جس کی وجہ سے ریاست کوقومی سطح پردین دیال اورسنسدآدرش یوجناجیسے قومی اعزازات حاصل ہوئے تاہم کانگریس کی حکومت بننے کے بعدریاست کے صفائی کرمچاریوں کو سات مہینوں سے تنخواہیں جاری نہیں کی گئیں۔