پہلی بارش نے امرت بھارت ریلوے اسٹیشن کے راز فاش کر دیئے

تاثیر۸  جولائی ۲۰۲۴:- ایس -ایم- حسن

رائے بریلی ، 08 جولائی: پہلی بارش نے امرت بھارت ریلوے اسٹیشن کے راز کو بے نقاب کردیا ۔ ایک سال قبل ہی 43کروڑ کی لاگت سے تزئین کاری کی گئی رائے بریلی اسٹیشن پر جھرنا پھوٹ پڑا اور لوگ خود کو بچانے کے لئے ادھر ادھر بھاگتے نظر آئے۔ اب ریلوے کی اس حالت کو سوشل میڈیا پر شدید تنقید کا نشانہ بنایا جا رہا ہے۔
دراصل اتوار سے رائے بریلی شہر میں وقفے وقفے سے بارش ہو رہی ہے۔ یہ اس سیزن کی بہترین بارش ہے لیکن اس بارش نے ریلوے مسافروں کے لیے پریشانی پیدا کردی ہے۔ اسٹیشن کے کئی مقامات پر جہاں کچھ پانی بہہ رہا تھا وہیں پلیٹ فارم نمبر ایک پر ایک جھرنا بہہ رہا تھا۔ ٹرین کے انتظار میں بیٹھے مسافر خود کو بچانے کے لیے بھاگتے نظر آئے۔ پلیٹ فارم پر پانی بھر جانے کی وجہ سے مسافروں کے پھسلنے کا خدشہ تھا۔ اس معاملے میں سینئر انجینئر وجے سریواستو کا کہنا ہے کہ ٹین شیڈمیں اوپر کچرا پھنس گیا تھاجس سے پانی بہنے لگا۔ صاف صفائی کرادی گئی ہے۔ اب حالات معمول پرہیں۔
قابل ذکر ہے کہ رائے بریلی ریلوے اسٹیشن کو حال ہی میں نئے سرے سے بنایا گیا تھا اور اس پر تقریباً 43 کروڑ روپے خرچ ہوئے تھے۔ اسے امرت بھارت اسٹیشن اسکیم میں بھی منتخب کیا گیا ہے۔ اس کے تحت ایسکلیٹر ، ڈیکوریشن ، پانی کا انتظام اور بیوٹیفکیشن کے کام کیے گئے۔ حالانکہ پہلی بارش ہی اس کوشش پر سوالیہ نشان کھڑا ہو گیا ہے۔