چنسورہ اسٹیشن پر ٹرین ٹھہرنا بھول کر آگے نکل گئی ہوڑہ، بردوان سپر لوکل

تاثیر۳      جولائی ۲۰۲۴:- ایس -ایم- حسن

ہگلی3/جولائی (محمد شبیب عالم) ہوڑہ، بردوان سپر لوکل ہوڑہ سے چلنے کےبعد شیرامپور ، شیوڑا پھولی، چندن نگر کےبعد چنسورہ اسٹیشن پر ٹھہرتی ہے مگر اس دن اس اسٹیشن پر ٹھہرنے کے بجائے آگے نکل گئی۔ اطلاع کے مطابق مقرر وقت سے دو منٹ تاخیر سے چلی ہوڑہ  بردوان سپر لوکل چنسورہ اسٹیشن پر اس ٹرین میں سوار مسافر گیٹ پر آکے کھڑے تھے ۔ مگر یہ کیا؟ ٹرین تو یہاں رکی ہی نہیں، بالکل تیزرفتاری کےساتھ ٹرین چنسورہ اسٹیشن کو چھوڑتے ہوئے آگے نکل گئی۔ لیکن جب اس غلطی کا احساس ڈرائیور کو ہوا اس نے اس ٹرین کو واپس چنسورہ اسٹیشن لاکر مسافروں کو اتارا ۔ منگک کی شام حیران کردینے والا واقعہ پیش آیا ۔ جب ہوڑہ – بردوان مین لائن سپر لوکل ٹرین 37849 سات بجے کے بجائے سات بجکر دو منٹ یعنی دو منٹ کی تاخیر سے ہوڑہ اسٹیشن سے چلی ۔ معمول کےمطابق یہ ٹرین ہوڑہ اسٹیشن سے چلنے کےبعد سیدھے شیرامپور ، شیوڑا پھولی ، چندن نگر کےبعد چنسورہ اسٹیشن پر ٹھہرتی ہے مگر آج یہ ٹرین چندن نگر اسٹیشن سے چھوٹنے کےبعد سیدھے چنسورہ اسٹیشن کو چھوڑ آگے نکل گئی ۔ اس سے قبل چنسورہ اسٹیشن پر اترنے والے سبھی مسافر ٹرین کے دروازے پر آکر کھڑے تھے مگر جیسے ہی ٹرین یہاں ٹھہرنے کے بجائے دندناتی ہوئی آگے ہگلی اسٹیشن پہنچ گئی ۔ اس وقت یہ مسافر شور مچانے لگے ۔ کچھ دور یہ ٹرین نکل جانے کےبعد ڈرائیور کو غلطی کی احساس ہوئی اور وہ ٹرین کو واپس پیچھے چنسورہ اسٹیشن لیکر آئے اور مسافروں کو اتارا ۔ جیسا کہ لوگ جانتے ہیں ۔ ہوڑہ – بردوان سپر لوکل ہے بہت سے مضافاتی مسافر وقت پر گھر پہنچنے کے لئے اس ٹرین پر انحصار کرتے ہیں۔ آج اس واقعے پر دیپک داس نامی مسافر کے مطابق ’’چندن نگر تک سب کچھ ٹھیک تھا۔ 7:55 پر ٹرین چنسورہ میں داخل ہوئی اور بغیر رکے سیدھی ہگلی چلی گئی ۔ چنسورہ کے مسافروں کو سمجھ نہیں آیا کہ کیا ہوا ! بہت سے مسافر دروازے پر آکرکھڑے تھے ۔ لیکن ٹرین نہیں رکی اور سیدھے ہگلی اسٹیشن پر رکی۔ وہاں سے ٹرین 8 بجکر ایک منٹ پر چنسور اسٹیشن واپس آئی اور مسافروں کو اسٹیشن پر اتارنے اور تقریباً 10 منٹ تک کھڑے رہنے کے بعد ٹرین دوبارہ اپنی منزل کی طرف روانہ ہوئی ۔ ریلوے ذرائع کے مطابق یہ ڈرائیور کی غلطی تھی یا کوئی اور وجہ اس کی تحقیقات کی جارہی ہیں ۔ ایسٹرن ریلوے کے چیف پبلک ریلیشن آفیسر کوشک مترا نے مختصر انداز میں جواب دیا کہ ” مجھے معاملہ کی خبر ملی ہے ” لیکن ایسا کیوں اور کیسے ہوا اسکی جانکاری فراہم کی جارہی ہے ۔