کنسرٹ میں مونالی ٹھاکر کے ساتھ بدتمیزی، گلوکارہ برہم

تاثیر۳۰      جون ۲۰۲۴:- ایس -ایم- حسن

ممبئی،1 جولائی:’موہ-موہ کے دھاگے‘ سے شہرت پانے والی گلوکارہ مونالی ٹھاکر کے ساتھ ان کے لائیو کنسرٹ کے دوران بدتمیزی کی گئی۔ اس سے گلوکارہ برہم ہوگئیں اور انہوں نے کنسرٹ وہیں روک دیا۔ بھیڑ میں سے ایک شخص نے اٹھ کر مونالی کے بارے میں قابل اعتراض تبصرہ کیا۔ اس کے بعد مونالی ناراض ہوگئی۔
رپورٹ کے مطابق مونالی ٹھاکر کے لائیو کنسرٹ کا اہتمام سیج یونیورسٹی، بھوپال میں ہفتہ 29 جون کو کیا گیا۔ کنسرٹ میں کالج کے طلباء￿ اور دیگر شائقین کی بڑی تعداد نے شرکت کی۔ رپورٹ کے مطابق مونالی نے گانا گاتے ہوئے اچانک کنسرٹ روک دیا۔ اس نے بعد میں ٹیم کے ارکان کو بتایا کہ کیا ہوا تھا اور وہ ناراض تھی۔ ہجوم میں سے ایک شخص نے مونالی کی طرف اشارہ کیا اور قابل اعتراض تبصرہ کیا۔ اس نے کہا، “یہ چھیڑ چھاڑ ہے۔ کچھ لوگ بھیڑ کا فائدہ اٹھاتے ہیں اور خفیہ تبصرے کرتے ہیں۔ میں اس کے خلاف آواز اٹھا رہی ہوں تاکہ لوگ بھی اسے یاد رکھیں۔
اس کے بعد جب معاملہ ٹھنڈا ہوا تو پھر کنسرٹ شروع ہو گیا۔ اس شخص نے بعد میں وضاحت کی کہ اس نے صرف مونالی کے ڈانس موو پر تبصرہ کیا تھا اور کوئی قابل اعتراض بات نہیں کہی تھی۔ مونالی ٹھاکر نے بالی ووڈ میں کئی ہندی گانے گائے ہیں جو سپر ہٹ ہو چکے ہیں۔ انہوں نے ‘موہ مو کے دھاگے’ کے لئے نیشنل ایوارڈ اور ‘سنوار لوں’ گانے کے لئے فلم فیئر جیتا تھا۔